The news is by your side.

Advertisement

جرم ثابت ہوا تو سیاست چھوڑ دوں گا، سخت سزا کے لیے تیار ہوں، سعید غنی

کراچی: وزیر اطلاعات سندھ سعید غنی نے ایس ایس پی ڈاکٹر رضوان کی جانب سے رپورٹ میں لگائے جانے والے تمام الزمات کو بے بنیاد قرار دیتے ہوئے کہا کہ جرم ثابت ہوا تو سیاست چھوڑ دوں گا، سخت سزا کے لیے تیار ہوں۔

تفصیلات کے مطابق کراچی میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے صوبائی وزیر سعید غنی نے کہا کہ جرائم پیشہ لوگوں کی سیاسی سرپرستی پر رپورٹ میں کسی کا نام نہیں تھا، جب یہ رپورٹ آئی تو اے ڈی خواجہ آئی جی سندھ تھے۔

وزیر اطلاعات سندھ نے کہا کہ چنیسر گوٹھ میں جرائم پیشہ عناصر کی سرپرستی کے معاملے پر آئی جی کو خط بھیجا، خط پر اے ڈی خواجہ کی طرف سے کوئی جواب نہیں آیا تھا۔

انہوں نے کہا کہ چنیسرگوٹھ میں منشیات کا کاروبار کرنے والوں کو سب جانتے ہیں، منشیات کا کاروبار کرنے والوں کے خلاف ایف آئی آر بھی درج ہیں، جو 4 سے 5 معروف لوگ منشیات میں ملوث ہیں ان کا نام تک نہیں۔

سعید غنی نے کہا کہ جس لڑکے کا ذکر ہے وہ معذور اور یو سی دفتر میں چپڑاسی ہے، رپورٹ میں میرے بھائی کا حوالہ بھی موبائل میں صرف نمبر کی بنیاد پر ڈالا گیا، رپورٹ ثابت ہوگئی تو سیاست،عہدے چھوڑوں گا اور سخت سزا کے لیے بھی تیار ہوں۔

وزیر اطلاعات سعیدغنی کے بھائی کا جرائم پیشہ افراد سے روابط کا انکشاف

واضح رہے کہ ایس ایس پی جمشید ٹاؤن ڈاکٹر رضوان نے رپورٹ میں انکشاف کیا کہ سعید غنی کے بھائی فرحان غنی اجرتی قاتل، منشیات فروشوں کے سہولت کار ہیں۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں