The news is by your side.

”بیرونی سازش سے مسلط حکومت کے ہتھکنڈے قابل مذمت ہیں“

اسلام آباد: چیئرمین پاکستان تحریک انصاف اور سابق وزیر اعظم عمران خان نے اے آر وائی نیوز کے صحافی ارشد شریف کو ہراساں کرنے کی مذمت شدید الفاظ میں مذمت کی ہے۔

اے آر وائی نیوز کے مطابق چیئرمین پی ٹی آئی عمران خان کی زیرِ صدارت پارٹی ترجمانوں کا اجلاس ہوا جس میں امپورٹڈ حکومت کی جانب سے ذرائع ابلاغ پر عائد سنسرشپ کی مذمت کی گئی۔

اجلاس میں مخصوص صحافیوں کے خلاف جاری ٹارگٹڈ آپریشن پر بھی شدید رد عمل کا اظہار کیا گیا اور حکومتی عتاب کا نشانہ بننے والے صحافیوں کے حق میں بھر پور آواز اٹھانے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔

اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے عمران خان نے کہا کہ بیرونی سازش سے مسلط حکومت کے ہتھکنڈے قابل مذمت ہیں، سچ اور جھوٹ بالکل واضح ہو کر قوم کی نگاہوں کے سامنے ہے۔

سابق وزیر اعظم نے مزید کہا کہ بداعمالیوں کی سیاہی کو حکومت کے جبر سے اجالے میں بدلنا چاہتے ہیں، قوم بددیانت ضمیر فروشوں کا بیانیہ اپنانے کو کسی طور تیار نہیں۔

عمران خان نے کہا کہ ریاستی قوت کے بل پر سچ دبانے والوں کو ادنیٰ سی کامیابی حاصل نہیں ہوگی، کٹھ پتلیوں سمیت امپورٹڈ حکومت نامنظور بہر صورت قوم کی آواز ہے، پی ٹی آئی جبر اور بھکاریوں کے خلاف پیشہ ور اہل سیاست کے ساتھ کھڑی ہے۔

اجلاس میں ملکی مجموعی صورتِ حال اور سیاسی و انتظامی موضوعات پر بیانیے کا جائزہ لیا گیا۔ بیرونی ایما پر مداخلت اور حکومت کی تبدیلی کی سازش بے نقاب کرنے پر اتفاق کیا گیا۔

میڈیا و سماجی میڈیا پر پی ٹی آئی کے بیانیے کی ترویج کی خصوصی حکمت عملی کی منظوری دی گئی۔ ضمانتوں پر رہا ٹولے کی حکومت کے پر وپیگنڈے کا پردہ چاک کرنے کی حکمت عملی تیار کی گئی۔ پاکستان تحریک انصاف کے بیانیے کی تشہیر کی حکمت عملی بھی تیار کی گئی۔ ملک بھر میں آج منائی جانے والی شبِ دعا کی تیاریوں پر بھی مفصل بریفنگ دی گئی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں