اگر ن لیگ کا سینیٹ چیئرمین بن جاتا، تو ادارے تباہ ہوجاتے: عمران خان PTI
The news is by your side.

Advertisement

اگر ن لیگ کا سینیٹ چیئرمین بن جاتا، تو ادارے تباہ ہوجاتے: عمران خان

لاہور:پی ٹی آئی چیئرمین عمران خان نے کہا ہے کہ اگر ن لیگ کا چیئرمین سینیٹ آتا، تو چوری اور کرپشن کی اجازت کا قانون بنا دیا جاتا.

ان خیالات کا اظہار انھوں نے لاہور میں‌ پی ٹی آئی کے سوشل میڈیا سمٹ سے خطاب کرتے ہوئے کیا. ان کا کہنا تھا کہ جمہوری آمرزیادہ خطرناک ہوتا ہے، ہٹلرالیکشن جیت کراقتدار میں آیا اورپھر تمام اداروں پر غالب آگیا. اچھا ہوا، ن لیگ کا چیئرمین سینیٹ نہیں بننے دیا. اگر ایسا ہوتا، تو ادارے تباہ ہوجاتے.

انھوں نے مخالفین کو آڑے ہاتھوں لیتے ہوئے کہا کہ شہبازشریف سے بڑا ڈراما باز کہیں نہیں ملے گا، صبح اٹھ کردیکھو، ہراخبار میں شہباز شریف کی تصویرہوتی تھی، شکرہےکہ عدالت نے شہباز شریف کو ذاتی تشہیرسے روک دیا۔

عمران خان نے کہا ہے کہ آج ہمیں‌ ادارے مضبوط اور انسانوں پرپیسہ خرچ کرنے کی ضرورت ہے،  نوجوانوں کو بھرپور جدوجہد کرنی پڑے گی، ہم سوشل میڈیا کے ذریعے کے مخالفین کا مقابلہ کریں گے۔


عمران خان نے ملتان میٹرومنصوبے کو سفید ہاتھی قراردے دیا


عمران خان کا کہنا تھا کہ ملتان میٹرو میں خالی بسیں چل رہی ہیں، ملتان میں کوئی میٹرو میں نہیں بیٹھتا، شہبازشریف نے صرف پیسہ بنانے کے لئے ملتان میٹروبنائی.ہم ایک مافیا کے خلاف نکلےہیں، پرانے کارکنان کونہ میں بھولا ہوں، نہ پارٹی بھولے گی، سوشل میڈیا نے دنیا بدل دی، عرب بہارتحریک میں سوشل میڈیا کےذریعے لوگ آمروں کے خلاف نکلے۔

ان کا کہنا تھا کہ بانی متحدہ کے خلاف بند کمروں میں بھی بات نہیں کرسکتے تھے، اگر میں بانی متحدہ کے خلاف نہیں بولتا، تو کراچی میں آج بھی قتل ہورہے ہوتے. شکیل الرحمان کا میڈیا ہاؤس شریف خاندان کا ساتھ دے رہا ہے، ہمارے پاس انہیں دینے کے لیے پیسہ نہیں۔


عمران خان کی شکل میں دوسرا بانی ایم کیوایم قبول نہیں، بلاول بھٹو زرداری


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں، مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کےلیے سوشل میڈیا پرشیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں