The news is by your side.

Advertisement

بھارت لاک ڈاؤن : ایمبولینس کے انتظار میں 3 گھنٹوں سے کرسی پر بیٹھا مریض چل بسا

پونہ : بھارت میں ایک ضعیف مریض ایمبولینس کے انتظار میں بیٹھا دنیا سے رخصت ہوگیا، جان چلی گئی لیکن ایمبولینس نہ آئی، سوشل میڈیا پر صارفین نے سخت رد عمل کا اظہار کیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق بھارتی ریاست مہاراشٹر کے شہر پونہ میں آج صبح سویرے ایک 54سالہ مریض یسوداس ایم فرانسس لاک ڈاؤن کے دوران ایمبولینس کے انتظار میں سڑک کے کنارے کرسی پر بیٹھا بیٹھا چل بسا۔

اس حوالے سے اس کے اہل خانہ کا کہنا ہے کہ یہ واقعہ صبح 4 بجے کے قریب پیش آیا تھا ، اس سے قبل رات ایک بجے ان کی طبیعت خراب ہوئی تھی جس کی وجہ سے اہل خانہ نے ایمبولینس طلب کی اور پولیس سے مدد بھی طلب کی۔

بعدازاں انہوں نے مریض کو گھر کے پاس علاقے کی منوشا مسجد کے قریب سڑک پر کرسی پر بٹھایا اور ایمبولینس کا انتظار کرنے لگے لیکن تین گھنٹے گزر گئے کوئی نہیں آیا۔

اس دوران پولیس کے کچھ پولیس اہلکار جو معمول کی گشت پر تھے انہیں صورتحال سے آگاہ کیا لیکن ان کے پاس بھی ایمبولینس کی سہولت میسر نہیں تھی۔

اس موقع پر فراسنسس کی اہلیہ، بہن اور دیگر رشتہ دار بھی اس کے پاس ہی موجود تھے کہ اچانک اس کا سانس اکھڑنے لگا اور تقریباً صبح چار بجے پلاسٹک کی کرسی پر بیٹھے ہوئے فرانسس نے آخری سانس لی اور دنیا سے رخصت ہوگیا۔

اس واقعے کی ویڈیوز اور تصاویر سوشل میڈیا پر وائرل ہوگئیں، جس پر صارفین نے سخت ردعمل کا اظہار کیا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں