ہندوستان میں غیرت کے نام پر قتل، چھ افراد کو سزائے موت -
The news is by your side.

Advertisement

ہندوستان میں غیرت کے نام پر قتل، چھ افراد کو سزائے موت

تمل ناڈو: ہندوستانی ریاست تمل ناڈو میں غیرت کے نام پر ایک نوجوان کو قتل کرنے والے چھ افراد کو موت کی سزا سنا دی گئی۔ نوجوان کو ایک اعلیٰ ذات کی لڑکی سے شادی کرنے پر قتل کیا گیا تھا۔

برطانوی خبر رساں ادارے کے مطابق 2016 میں چند افراد نے مجمع کے سامنے ایک بائیس سالہ نوجوان شنکر کو تشدد کر کے ہلاک کر دیا تھا۔ اس واقعے کی سی سی ٹی فوٹیج وائرل ہوگئی تھی، جس کے خلاف سماجی حلقوں نے آواز اٹھائی اور ہندوستان میں رائج ذات پات کا فرسودہ نظام پھر موضوع بحث بن گیا۔

تفصیلات کے مطابق شنکر کا تعلق دلت ذات سے تھا، جب کہ اس کی بیوی کوشلیہ نسبتاً اعلیٰ ذات سے تھی۔ واقعے میں شنکر کی بیوی بھی شدید زخمی ہوئی تھی۔

یہ بھی پڑھیں: کانگریس رہنما کی آزادیِ کشمیر کی حمایت، مودی سیخ پا

اِس مقدمے میں گیارہ افراد پر فرد جرم عائد کی گئی تھی، جن میں سے چھ کو سزائے موت، ایک کو عمر قید جب کہ ایک کو پانچ برس قید کی سزا سنائی گئی ہے۔ سزائے موت پانے والوں میں کوشلیہ کے والد بھی شامل ہیں۔

واضح رہے انڈیا میں ہر سال سیکڑوں افراد غیرت کے نام پر قتل کر دیے جاتے ہیں۔ تجزیہ کاروں کے مطابق مودی سرکار میں ہندوستان میں مذہبی انتہاپسندی کے ساتھ سماجی و طبقاتی شدت پسندی بھی بڑھ رہی ہے۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں