The news is by your side.

Advertisement

ضبط شدہ گھر کے سلسلے میں اسحاق ڈار کی اہلیہ کی درخواست خارج ہو گئی

اسلام آباد: عدالت نے سابق وزیر خزانہ اسحاق ڈار کی اہلیہ کی درخواست پر ضبط شدہ گھر کا معاملہ نمٹا دیا۔

تفصیلات کے مطابق اسلام آباد ہائیکورٹ نے اسحاق ڈار کی اہلیہ کی لاہور میں گھر کی نیلامی کے خلاف درخواست مسترد کر دی، اور گھر پر تبسم اسحاق ڈار کا دعویٰ مسترد کرنے کا فیصلہ برقرار رکھا۔

محفوظ شدہ فیصلہ اسلام آباد ہائیکورٹ کے جسٹس محسن اختر کیانی اور جسٹس ثمن رفت امتیاز نے سنایا، 25 جنوری کو عدالت نے تبسم اسحاق کی درخواست پر فیصلہ محفوظ کیا تھا۔

7 نومبر 2019 کے احتساب عدالت کے فیصلے کو اسلام آباد ہائیکورٹ نے بحال کر دیا، اور تبسم ڈار کی درخواست ناقابل سماعت قرار دے کر خارج کر دی۔

عدالت نے گھر کی نیلامی پر دیا گیا اسٹے آرڈر بھی ختم کر دیا، عدالت کے فیصلے کے بعد پنجاب حکومت کو اسحاق ڈار کا گلبرگ تھری لاہور میں واقع گھر نیلام کرنے کی اجازت مل گئی۔

واضح رہے کہ احتساب عدالت نے اسحاق ڈار کا گلبرگ تھری لاہور کا گھر 7 نومبر کو ضبط کر کے نیلام کرنے کا حکم دیا تھا، جس کے خلاف اسحاق ڈار کی اہلیہ تبسم اسحاق نے درخواست دائر کی تھی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں