جمعہ, جون 21, 2024
اشتہار

شیر افضل مروت نے اسحاق ڈار کی بطور نائب وزیر اعظم تعیناتی چیلنج کر دی

اشتہار

حیرت انگیز

اسلام آباد: پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے رہنما شیر افضل مروت نے وزیر خارجہ اسحاق ڈار کی نائب وزیر اعظم تعیناتی چیلنج کر دی۔

شیر افضل مروت نے اسلام آباد ہائی کورٹ میں درخواست جمع کروا دی جس میں انہوں نے مؤقف اختیار کیا کہ اسحاق ڈار پہلے ہی بطور وزیر خارجہ کام کر رہے ہیں، 28 اپریل کو ان کی بطور ڈپٹی وزیر اعظم تعیناتی کا نوٹیفکیشن جاری کیا گیا۔

درخواست گزار نے کہا کہ وزیر اعظم کا عہدہ آئینی ہے جبکہ ڈپٹی وزیر اعظم عہدے سے آئین ناواقف ہے، آئین میں ایسی کوئی شق نہیں جو کابینہ ڈویژن کو ایسی تعیناتی کی اجازت دے۔

- Advertisement -

انہوں نے کہا کہ عوام کے خرچے پر ایک ہی شخص کو دو عہدے ذاتی مفاد کیلیے عطا کیے گئے ہیں، ایک شخص جو غیر قانونی طریقے سے تعینات ہو ریاست کی مراعات نہیں لے سکتا۔

شیر افضل مروت نے درخواست میں استدعا کی کہ اسحاق ڈار کی بطور ڈپٹی وزیر اعظم تعیناتی کا 28 اپریل کا نوٹیفکیشن کالعدم قرار دیا جائے۔

گزشتہ روز ایک شہری نے اپنے وکیل کے توسط سے اسلام آباد ہائی کورٹ میں اسحاق ڈار کی بطور نائب وزیر اعظم تعیناتی کے خلاف درخواست دائر کی تھی جس میں پرنسپل سیکرٹری ٹو وزیر اعظم، سیکرٹری کابینہ ڈویژن اور وزیر خارجہ کو فریق بنایا گیا تھا۔

درخواست گزار کا کہنا تھا کہ وفاقی وزیر کی بطور نائب وزیر اعظم تعیناتی کا نوٹیفکیشن آئین کے خلاف ہے، ان کی بطور نائب وزیر اعظم تعیناتی آرٹیکل 4 کی خلاف ورزی ہے۔

شہر نے اپنی درخواست میں استدعا کی تھی کہ ان کی تعیناتی کا نوٹیفکیشن کالعدم قرار دیا جائے اور کیس کے حتمی فیصلے تک انھیں کام سے روکا جائے۔

Comments

اہم ترین

ویب ڈیسک
ویب ڈیسک
اے آر وائی نیوز کی ڈیجیٹل ڈیسک کی جانب سے شائع کی گئی خبریں

مزید خبریں