site
stats
عالمی خبریں

اسرائیل فلسطین پرجبری تسلط ختم کرے، ترکی کا مطالبہ

انقرہ : ترک وزارتِ خارجہ نے کہا ہے کہ اسرائیل نے فلسطین پر ناجائز تسلط کر رکھا ہے عالمی طاقتیں فلسطینی عوام کو انصاف فراہم کرتے ہوئے اسرائیل کا قبضہ ختم کروائیں۔

ترک میڈیا کے مطابق وزارت خارجہ کی جانب سے جاری کردہ بیان میں فلسطین پر قابض اسرائیلی افواج کو واپس بھیجوا کر اسرائیل کا جبری تسلط ختم کرنے کا مطالبہ کیا گیا ہے.

ترک وزارت خارجہ نے فلسطینی تنظیموں حماس اور فتح کے درمیان معاہدے طے پانے پر اظہار خیال کرتے ہوئے کہا کہ خطے میں قیام امن اور تنازع فلسطین کے منصفانہ حل کے لیے تمام فلسطینی قوتوں کا متحد ہونا ضروری ہے۔

ترک وزارت خارجہ نے مزید کہا کہ فلسطین کی سیاسی فکروں کا اتحاد خوش آئند ہے اور اسرائیل کے جبری تسلط کے خلاف ایک بڑی کامیابی ہے جس کے بعد تصفیہ فلسطین کے امکانات مزید روشن ہو گئے ہیں.

خیال رہے فلسطین کے سیاسی قوتیں حماس اور فتح کے درمیان مصر میں ایک معاہدہ طے پایا ہے جس کی رو سے فلسطین میں نہ صرف یہ کہ آزاد الیکشن کرائے جائیں گے بلکہ اسرائیل کے خلاف اور فلسطین کی آزادی کے لیے مشترکہ جدوجہد کا عندیہ دیا گیا ہے.

فلسطین تنظیموں کے درمیان معاہدے کو عالمی سطح پر بالعموم اور اسلامی دنیا میں بالخصوص سراہا جا رہا ہے جس کی سب سے پہلے تائید بھی ترکی سے سامنے آئی تھی جو اسلامی دنیا میں یکجہتی اور مسلمانوں پہ ہونے والے مظالم کے خلاف سب سے موثر آواز بنتا ہے.


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی وال پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top