The news is by your side.

عمران خان پر قاتلانہ حملہ، تحقیقات کے لیے جے آئی ٹی بنانے کا فیصلہ

لاہور: پنجاب حکومت نے سابق وزیر اعظم عمران خان پر قاتلانہ حملے کے بعد تحقیقات کے لیے مشترکہ تحقیقاتی ٹیم (جے آئی ٹی) بنانے کا فیصلہ کیا ہے، لانگ مارچ کے دوسرے مرحلے میں سخت سیکیورٹی انتطامات کا بھی فیصلہ کیا گیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق سابق وزیر اعظم عمران خان پر قاتلانہ حملے کے بعد پنجاب حکومت نے تحقیقات کے لیے مشترکہ تحقیقاتی ٹیم (جے آئی ٹی) بنانے کا فیصلہ کیا ہے۔

جے آئی ٹی بنانے کا فیصلہ پنجاب کابینہ کی کمیٹی برائے امن و امان کے اجلاس میں کیا گیا جس کی صدارتی کمیٹی کے چیئرمین راجہ بشارت نے بذریعہ ویڈیو لنک راولپنڈی سے کی۔

اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ جے آئی ٹی کی سربراہی ایڈیشنل آئی جی ہائی ویز پیٹرول ریاض نذیر کریں گے، جے آئی ٹی کے دیگر ارکان میں متعلقہ ایجنسیوں کے نمائندے شامل ہوں گے۔

پنجاب کابینہ کی کمیٹی نے چیئرمین تحریک انصاف کو خصوصی سیکیورٹی دینے کا بھی فیصلہ کیا ہے۔ لانگ مارچ کے دوسرے مرحلے میں کنٹینر پر سیکیورٹی کے سخت انتظامات کرنے کی ہدایت دی گئی ہے۔

چیئرمین کمیٹی راجہ بشارت کا کہنا ہے کہ پولیس اور ضلعی انتظامیہ پاکستان تحریک انصاف کی مقامی قیادت سے رابطہ رکھیں، کنٹینر پر بلٹ پروف روسٹرم اور گلاس لازمی نصب کیا جائے گا، اسنائپرز کی تعیناتی و دیگر سیکیورٹی انتظامات میں کوتاہی نہیں ہونی چاہیئے۔

اجلاس میں موٹر ویز کو جلد کھولنے اور ججز کو راستہ دینے کے لیے پاکستان تحریک انصاف سے بات کرنے کا بھی فیصلہ کیا گیا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں