The news is by your side.

Advertisement

نوجوان پر گاڑی چوری کا الزام، عدالت نے کولڈ ڈرنک پینے پر پابندی لگادی

ہوائی : امریکی ریاست کی عدالت نے نوجوان کو گاڑی چوری کے الزام میں چار برس تک اپنی پسندیدہ مشروب پیپسی نہ پینے کی سزا سنا دی۔

تفصیلات کے مطابق امریکی ریاست ہوائی کے شہر ویلوکو کی عدالت نے دو روز قبل گاڑی چوری کیس کی سماعت کرتے ہوئے 21 سالہ ملزم کرسٹوپر مونٹیلیانو پر پیپسی پینے کی پابندی عائد کردی۔

عدالت کی جج رونڈا لو کا کہنا تھا کہ مونٹیلیانو نے گرفتاری کے وقت پولیس کو غلط بیان ریکارڈ کرایا تھا۔

جج کا کہنا تھا کہ مونٹیلیانو نے پولیس کو بیان دیا تھا کہ اس کے عزیز (کزن) نے خود اسے گاڑی چلانے کی اجازت دی ہے جس کے بعد میں گاڑی ڈرائیو کرتے ہوئے اپنی پسندیدہ مشروب (پیپسی) خریدنے جارہا ہوں۔

عدالت نے ملزم کے بیان کہ ’پیپسی اس کی پسندیدہ مشروب ہے‘ کے بعد حکم جاری کیا کہ وہ چار سال تک کولڈ ڈرنک نہیں پی سکتا۔

خاتون نے کہا کہ اب وہ چار سال تک کولڈ ڈرنک سے محروم رہے گا۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کا کہنا ہے کہ اٹارنی جنرل جوش جیمز نے عدالت سے درخواست کی مونٹیلیانو کو سات قید کی سزا بھی سنائی جائے تاکہ اسے قانون کی اہمیت کا اندازہ ہو۔

مونٹیلیانو نے جج رونڈا لی سے درخواست کی کہ ’میں کسی کی کار چوری نہیں کررہا تھا، میں جیل نہیں جانا چاہتا، مجھے رہا کردیا جائے‘۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کا کہنا ہے کہ عدالت نے مذکورہ نوجوان کو 100 گھنٹے کمیونٹی کی خدمت کرنے اور 100 ڈالر جرمانہ جمع کروانے کی سزا بھی سنائی ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں