The news is by your side.

Advertisement

’کل پی ڈی ایم جنازہ ہوگیا، مولانا صدارت سے استعفیٰ دیں‘

مردان: جمعیت علما اسلام پاکستان کے سابق رہنما مولانا شجاع الملک نے کہا ہے کہ پی ڈی ایم پہلے ہی مرچکی تھی، کل رات جنازہ بھی ہوگیا، مولانا فضل الرحمان علما کی لاج رکھتے ہوئے پی ڈی ایم کی صدارت سے فوری استعفیٰ دیں۔

مردان میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے مولانا شجاع الملک کا کہنا تھا کہ ’میں پہلے ہی بتا چکا تھا کہ پی ڈی ایم مرچکی ہے، کل رات کو ہونے والے اجلاس کے بعد پی ڈی ایم کا جنازہ بھی ہوگیا‘۔

مولانا شجاع الملک کا کہنا تھا کہ ’پاکستان پیپلزپارٹی نے کبھی بھی اسمبلیوں سے استعفے دینے کی بات نہیں کی، پی ڈی ایم میں شامل جماعتیں اپنے اپنے مفادات کی جنگ لڑ رہی ہیں، پی پی کے پاس سندھ کی حکومت ہے، ایسی صورت میں وہ صوبائی حکومت کیوں چھوڑے‘۔

مولانا شجاع الملک کا کہنا تھا کہ ’پی ڈی ایم جماعتیں خود ایک پیج پر نہیں، اپوزیشن اتحاد کا سب سے زیادہ نقصان جمعیت علما اسلام کو ہوا،  فضل الرحمان علماکی لاج رکھیں اور فوراً پی ڈی ایم صدارت سےاستعفیٰ دیں‘۔

اُن کا کہنا تھا کہ ’28مارچ کو جمیعت علمااسلام پاکستان کی کانفرنس ہوگی، جس میں مولانا شیرانی،مولانا گل نصیب،حافظ حسین احمد اور دیگر قائدین شرکت کریں گے‘۔

واضح رہے کہ ایک روز قبل پی ڈی ایم کا سربراہی اجلاس مولانا فضل الرحمان کی زیر صدارت اسلام آباد میں منعقد کیا گیا تھا، جس میں تمام جماعتوں کے قائدین نے شرکت کی جبکہ نواز شریف اور سابق صدر آصف علی زرداری نے بذریعہ ویڈیو لنک اجلاس میں شرکت کی تھی۔

اجلاس میں شریک گیارہ میں سے 9 جماعتوں نے لانگ مارچ سے قبل اسمبلیوں سے استعفے دینے کے فیصلے پر اتفاق کیا جبکہ پاکستان پیپلزپارٹی نے انکار کیا اور سوچنے کے لیے وقت بھی مانگا۔

سابق صدر آصف علی زرداری نے اسمبلیوں سے استعفوں کو نوازشریف کی وطن واپسی سے مشروط کیا اور یقین دہانی کرائی کہ پی پی جمہوریت کی بحالی کے معاملے پر ساتھ دیتی رہے گی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں