پاکستانی مصنفہ کاملہ شمسی نے ویمن پرائز فار فکشن جیت لیا
The news is by your side.

Advertisement

برطانیہ میں پاکستانی مصنفہ کاملہ شمسی نے ویمن پرائز فار فکشن جیت لیا

لندن : پاکستانی مصنفہ کاملہ شمسی نے برطانیہ میں اپنے ناول ‘ہوم فائر’ کے لیے 2018 کا ویمن پرائز فار فکشن جیت لیا اور ایوارڈ جیتنے والی پہلی پاکستانی خاتون بن گئیں۔

تفصیلات کے مطابق پاکستانی نژاد برطانوی مصنفہ کاملہ شمسی نے ویمن پرائز فار فکشن کا ایوارڈ اپنے نام کرلیا، انہں یہ ایوارڈ ان کی کتاب ہوم فائر کیلئے دیا گیا، کاملہ شمسی یہ ایوارڈ جیتنے والی پہلی پاکستانی خاتون ہیں۔

اس سے قبل انہیں بیلز پرائز اور اورنج پرائز کے لیے بھی نامزد کیا گیا تھا

پاکستانی مصنفہ کا ناول بنیاد پرستی اور خاندانی وفاداریوں کے بارے میں ہے، ہوم فائر کاملہ شمسی کا ساتواں ناول ہے اور وہ مختلف ایوارڈز کے لیے تین بار نامزد ہوئیں لیکن اس بار ان کی کتاب کو سال کی بہترین کتاب قرار دیتے ہوئے ویمن پرائز فار فکشن 2018 کا ایوارڈ دیا گیا ہے۔

کاملہ شمسی کراچی میں پیدا ہوئیں اور ابتدائی تعلیم بھی وہیں حاصل کی جس کے بعد وہ لندن منتقل ہوگئیں اور ان دنوں وہیں مقیم ہیں۔

خیال رہے کہ ’ویمن پرائز‘ برطانیہ کا خواتین کو ملنے والا اعلیٰ ترین ادبی ایوارڈ ہے، جو خواتین لکھاریوں کے ان کے فکشن پر ہر سال دیا جاتا ہے، اس ایوارڈ کا اغاز  سال 1996 میں ہوا، مقابلے میں جیتنے والی خاتون کو انعام کے طور پر 30  ہزار برطانوی پاؤنڈ بھی ملتے ہیں۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں۔ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں