The news is by your side.

Advertisement

کراچی ڈبل سواری پر پابندی، محافظوں نے قانون کو پیروں تلے روند دیا، شہریوں‌ کے چالان

کراچی: محکمہ داخلہ سندھ نے گزشتہ روز ڈبل سواری پر مکمل پابندی عائد کی تھی جس کے بعد استشنیٰ والے اداروں پر بھی پابندی کا اطلاق ہوا مگر سندھ پولیس کے اہلکاروں‌ نے پابندی کے احکامات کو ہوا میں‌ اڑا دیا۔

تفصیلات کے مطابق ایک روز قبل محکمہ داخلہ سندھ کی جانب سے موٹر سائیکل کی ڈبل سواری پر مکمل  پابندی عائد کرنے کا نوٹیفیکیشن جاری کیا گیا تھا۔

اس سے قبل سندھ حکومت نے صحافیوں، پولیس اور قانون نافذکرنے والے اداروں کو ڈبل سواری سے مستشنیٰ قرار دیا تھا جب کہ گزشتہ روز جاری ہونے والے نوٹی فکیشن میں‌ تمام محکموں سے خصوصی رعایت واپس لے لی تھی۔

محکمہ داخلہ کی جانب سے نوٹی فکیشن جاری ہونے کے بعد ایڈیشنل آئی جی غلام نبی میمن نے احکامات جاری کیے اور پابند کیا تھا کہ ڈبل سواری کی پابندی پر سختی سے عمل درآمد کیا جائے۔

مزید پڑھیں: کراچی: ڈبل سواری کی پابندی سے استثنیٰ ختم، صحافی اور پولیس اہل کار بھی پابند ہوں گے

آج شہر بھر میں صورت حال بالکل مختلف نظر آئی کیونکہ کراچی کی تمام اہم شاہراہوں اور چوراہوں پر پولیس اور ٹریفک پولیس عام شہریوں کے ڈبل سواری کی پابندی کی خلاف ورزی کے چالان کرتے نظر آئے مگر قانون کے محافظوں نے خود ہی احکامات کی دھجیاں اڑا دیں۔

نمائندہ اے آر وائی نیوز کی رپورٹ کے مطابق ڈبل سواری کی خلاف ورزی پر صرف ساؤتھ زون میں 300 سے زائد شہریوں کے چالان جبکہ 100 سے زائد موٹرسائیکلوں کو ضبط کیا گیا۔

شہر کی دیگر شاہراہوں پر پولیس اور ٹریفک پولیس اہلکار حکومتی احکامات کی دھجیاں بکھیرتے ڈبل سواری پر گھومتے نظر آئے اور انہیں ناکوں پر تعینات کسی اہلکار نے نہیں روکا اور نہ ہی اُن کا چالان کیا گیا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں