تازہ ترین

کوئٹہ: تفتان جانیوالی بس سے اغوا کیے گئے 9 مسافر قتل

کوئٹہ:نوشکی کے قریب تفتان جانیوالی بس سے اغوا کیے...

بہاولنگر واقعے کی مشترکہ تحقیقات ہوں گی، آئی ایس پی آر

آئی ایس پی آر نے کہا ہے کہ بہاولنگر...

عیدالفطر پر وفاقی حکومت نے عوام کو خوشخبری سنا دی

اسلام آباد: عیدالفطر کے موقع پر وفاقی حکومت نے...

ایشیائی بینک نے پاکستان میں مہنگائی میں کمی کی پیشگوئی کر دی

ایشیائی ترقیاتی بینک نے پاکستان میں آئندہ مالی سال...

سنگدل شخص نے بیوی اور 7 بچوں کو قتل کر دیا

پنجاب کے علاقے مظفر گڑھ میں اجتماعی قتل کا...

عدلیہ کو اہم ایشوز سے فراغت ہو تو ایف بی آر محصولات توجہ کے مستحق ہیں، خواجہ آصف

اسلام آباد: وزیر دفاع خواجہ آصف کا کہنا ہے کہ عدلیہ کو اگر اہم ایشوز سے فراغت ہو تو ایف بی آر محصولات توجہ کے مستحق ہیں۔

سماجی رابطوں کی سائٹ ایکس (ٹوئٹر) پر جاری اپنے بیان میں خواجہ آصف نے کہا کہ سپریم کورٹ میں 102 ارب محصولات کے کیس سالوں سے فیصلوں کے منتظر ہیں۔

وزیر دفاع نے کہا کہ ہائی کورٹ میں 742 ارب جبکہ ٹریبونلز میں 1700 ارب کے محصولات کیسز ہیں، میں کوشش میں ہوں  کے پتا چلے کہ یہ سلسلہ کب سے ہے۔

متعلقہ: جنرل باجوہ نے ہمارے ساتھ لمبا دھوکہ کیا، خواجہ آصف

انہوں نے بتایا کہ کئی سال پہلے میں نے پی اے سی میں محصولات کا مسئلہ اٹھایا تھا، محصولات کا مسئلہ اٹھایا مگر ایف بی آر نے زیادہ لفٹ نہ کروائی، یہ سب ایف بی آر، ٹیکس نا دہندہ اور عدلیہ کی ملی بھگت سے ہوتا ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ یہ 2544 ارب ہمارے بہت سے دکھ دور کر سکتے ہیں، صحت، تعلیم اور دفاع کے اخراجات پورے ہو سکتے ہیں، قرض اور آئی ایم ایف سے نجات مل سکتی ہے۔

اپنے بیان میں خواجہ آصف نے کہا کہ محصولات مذاکرات کے ذریعے سیٹل کیے جا سکتے ہیں بس تھوڑی ایمانداری اور وطن سے محبت کی ضرورت ہوگی۔

Comments

- Advertisement -