The news is by your side.

Advertisement

سفاکی کی انتہا، دوست کے ہاتھوں دوست قتل

لاہور کے علاقے شاد باغ ناخدا چوک میں دوست  نے اپنے ہی دوست  کو گولی مار کر قتل کردیا اور فرار ہوگیا پولیس نے  ملزم کی تلاش شروع کردی۔

دوستی کی بنیاد خلوص پر استوار ہوتی ہیں، کہا جاتا ہے کہ اصل دوست وہی ہے جو مشکل میں کام آئے لیکن اس دنیا میں کئی ایسے واقعات بھی رونما ہوتے ہیں جو اس پرخلوص رشتے کے نام پر دھبا ثابت ہوتے ہیں۔

لاہور میں بھی ایک ایسا واقعہ رونما ہوا ہے جہاں دوست نے اپنے ہی دوست کی جان لے لی۔

شاد باغ ناخدا چوک کے علاقے میں پیش آئے واقعے میں ایک شخص نے اپنے ہاتھوں دوست کو قتل کردیا، پولیس کے مطابق مقتول عدیل نیوشادباغ کا رہائشی تھا اور موٹرسائیکل پر اپنے دوست کے ساتھ جارہا تھا۔

پولیس کا کہنا ہے کہ عدیل کو الٰہی پارک کے دوست نے اس کے سر پر گولی ماری اور فرار ہوگیا، تاہم پولیس نے ملزم کا نام نہیں بتایا اور نہ ہی تاحال قتل کی وجہ جان سکی ہے۔

دوسری جانب سی سی پی او فیاض احمددیونے واقعے کا نوٹس لیتے ہوئے ایس پی سٹی سےقتل کی رپورٹ طلب کرلی ہے اور ملزم کی فوری گرفتاری کی ہدایت کی ہے۔

سی سی پی او کا کہنا ہے کہ سی سی ٹی وی کیمروں اورشواہد سےملزم کی گرفتاری یقینی بنائی جائے۔

ایس پی سٹی کے مطابق سینئرافسران اورفرانزک ٹیمیں جائےوقوعہ پرموجود ہیں اور شواہد جمع کیے جارہے ہیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ ملزم کی گرفتاری کے لیے ٹیم تشکیل دیدی ہے جلد گرفتار کرلیں گے۔

واضح رہے کہ گزشتہ سال کراچی میں مالی تنازع پر دوست کے ہاتھوں دوست قتل ہوگیا تھا۔

مزید پڑھیں: مالی تنازع کے باعث دوست کے ہاتھوں دوست کا قتل

ملزم نے تنازع کے تصفیے کے بہانے مقتول کو اپنے گھر بلاکر اس کو قتل کیا تھا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں