The news is by your side.

Advertisement

استاد کا مبینہ تشدد، طالب علم کو امریکا بھیجا جائے گا، ترجمان وزیراعلیٰ سندھ

کراچی:‌ ترجمان وزیراعلیٰ سندھ نے کہا کہ استاد کے مبینہ تشدد کے شکار اور والدین کو پاسپورٹ منگل تک مل جائے گا جس کے بعد جلدویزا حاصل کرکے بچے کو اہلِ خانہ سمیت امریکا روانہ کردیا جائے گا۔

ترجمان وزیر اعلی ہاؤس کا کہنا ہے کہ تشدد کے شکار طالب علم کو والدین کے ہمراہ بیرون ملک علاج کی غرض سے بھیجنے کے لیے تیاریاں مکمل کر لی گئی ہیں، منگل تک پاسپورٹ موصول ہو جائیں گے جس کے بعد ویزا حاصل کیا جائےگا۔

ترجمان کا کہنا تھا کہ وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ جلد ہی امریکی قونصل جنرل سے بذاتِ خود رابطہ کر کے بچے اور اہلِ خانہ کے ویزے کی جلد از جلد اجراء کی درخواست کریں گے۔

اسی سے متعلق : کیڈٹ کالج لاڑکانہ، طالب علم کو علاج کے لیے امریکا بھیجنے کی تجویز

دریں اثناء وزیر اعلی سندھ مراد علی شاہ نے میڈیا سے گفتگو میں بتایا کہ طالب علم کےعلاج کے لیے میں خود توجہ دے رہا ہوں اور مبینہ تشدد کے شکار طالب علم کوعلاج کے لیے امریکا بھیجا جائے گا۔

واضح رہےکہ طالب علم محمد احمد حسین اس وقت جناح اسپتال کے میڈیکل آئی سی یو کے آئیسولیشن وارڈ میں زیرِ علاج ہے اور صوبائی حکومت کی جانب سے بیرون ملک علاج کے لیے بھیجے جانے تک طالب علم جناح اسپتال میں ہی زیر علاج رہے گا۔

یاد رہے محمد احمد حسین لاڑکانہ کیڈٹ کالج کا طالب علم ہے جسے شدید علالت کے باعث پہلے مقامی اسپتال داخل کیا گیا تھا طالب علم کے والد نے موقف اختیار کیا تھا کہ بچے کی علالت کی وجہ کالج کے استاد کا مبینہ تشدد ہے۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں