راکٹ حملوں کے بعد طرابلس کا ہوائی اڈہ بند، جھڑپیں‌ جاری closes Tripoli airport
The news is by your side.

Advertisement

راکٹ حملوں کے بعد طرابلس کا ہوائی اڈہ بند، جھڑپیں‌ جاری

طرابلس: لیبیا کے دارالحکومت طرابلس کے بین الاقوامی ہوائی اڈے پر راکٹ حملوں کے بعد فضائی آپریشن معطل کردیا گیا، دارالحکومت کے مشرق میں ہوائی اڈے کے اطراف میں شدید جھڑپوں کی اطلاعات ہیں۔

غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق معیتیقہ ہوائی اڈے پر نامعلوم اطراف سے داغے گئے راکٹوں اور گولہ باری کے بعد ہوائی اڈے سے دھوئیں کے بادل اُٹھتے دکھائی دئیے، ہوائی اڈے کی انتظامیہ نے ایک بیان میں کہا ہے کہ راکٹ حملوں کے بعد فضائی سرگرمیاں معطل کردی گئی ہیں۔

لیبیا کی فضائی کمپنی کی ایک پرواز جو مصر کے شہر اسکندریہ سے آرہی تھی کا راستہ تبدیل کرکے 190 کلومیٹر دور ہوائی اڈے کی طرف موڑ دیا گیا ہے۔

رپورٹ کے مطابق راکٹ حملوں میں طرابلس کے المعیتیقہ ہوائی اڈے کو نقصان پہنچا ہے اور اس کے بعد ہوائی اڈے کو ہر طرح کے فضائی نقل و حرکت کے لیے بند اور اس ہوائی اڈے پر اترنے والی پروازوں کو متبادل ہوائی اڈوں کی طرف بھیجا گیا ہے۔

واضح رہے کہ گزشتہ روز ہوائی اڈے پر ہونے والے راکٹ حملوں کے نتیجے میں متعدد افراد زخمی بھی ہوئے تھے جنہیں طبی امداد کے لیے اسپتال منتقل کردیا گیا تھا۔

خیال رہے کہ طرابلس کے معیتیقہ ہوائی اڈے کو 31 اگست سے سات ستمبر تک شہر میں جاری لڑائی کے باعث بند کردیا گیا تھا، اس لڑائی میں 63 افراد ہلاک ہوگئے تھے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں