The news is by your side.

لانگ مارچ کے شرکا کو کمرے نہیں دیے جائیں گے، اسلام آباد پولیس کا ہوٹلوں کو حکم

اسلام آباد: پولیس نے وفاقی دارالحکومت کے ہوٹلوں اور گیس ہاؤسز پر پابندی لگا دی ہے کہ لانگ مارچ کے شرکا کو کمرے نہیں دیے جائیں گے۔

تفصیلات کے مطابق اسلام آباد پولیس نے ہوٹلوں اور گیسٹ ہاؤسز کے لیے حکم نامہ جاری کیا ہے کہ کوئی ہوٹل یا گیسٹ ہاؤس لانگ مارچ کے شرکا کو کمرے نہیں دے گا۔

پولیس نے کہا ہے کہ روزانہ کی بنیاد پر ہوٹلوں اور گیسٹ ہاؤسز کی چیکنگ ہوگی، اگر لانگ مارچ میں شریک شخص کو ہوٹل کا کمرہ دیا گیا تو اس پر سخت کارروائی ہوگی۔

اسلام آباد انتظامیہ نے تحریک انصاف کو لانگ مارچ کے لیے این او سی دینے سے بھی انکار کر دیا ہے، اور نیا لیٹر جاری کرتے ہوئے لکھا کہ ماضی میں این او سی کی خلاف ورزیاں کی گئیں، پی ٹی آئی شق وار وضاحت دے اور تحریری طور پر مطمئن کرے۔

انتظامیہ نے مارچ کے راستے میں رکاوٹیں بھی کھڑی کر دی ہیں، اسلام آباد میں جگہ جگہ کنٹینر لگ گئے، ریڈ زون جانے والے تین راستے مکمل سیل کر دیے گئے ہیں، جب کہ ایف سی اور پولیس الرٹ ہو گئی ہے، فلیگ مارچ بھی کیا گیا۔

واضح رہے کہ تحریک انصاف کا حقیقی آزادی مارچ آج آزادی چوک سے روانہ ہوگا، عمران خان نے حقیقی آزادی ملنے تک سفر جاری رکھنے کا اعلان کیا اور کہا بند کمروں میں فیصلے ہوتے ہیں، حقیقی آزادی کی تحریک کا پہلا مرحلہ صاف اور شفاف الیکشن کا انعقاد ہے، کسی کا ظلم نہیں سہیں گے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں