The news is by your side.

Advertisement

کیلیفورنیا میں گانجے کی فروخت کو قانونی قرار ،ٹرمپ انتظامیہ کی شدید مخالفت

کیلیفورنیا : ٹرمپ انتظامیہ کی جانب سے منشیات کی فروخت کو قانونی قرار دئے جانے کی شدید مخالفت کے باوجود ریاست کیلیفورنیا میں گانجے کی فروخت کو قانونی قرار دیدیا۔

تفصیلات کے مطابق نئے سال کی آمد پر ریاست کیلیفورنیا میں گانجے کی فروخت کو قانونی قرار دے دیا گیا ہے، جبکہ ٹرمپ انتظامیہ وفاقی پروسیکیوٹرز کو گانجے سے متعلق مقدمات میں سختی برتنے کی ہدایات جاری کر رہی ہے۔

اب امریکہ بھر سے گانجے کا مزا لینے کے لیے لوگ کیلیفورنیا کا رخ کر رہے ہیں، کیلوفورنیا میں اب گانجے کے مختلف سٹورز کھلے عام فروخت جاری رکھ سکیں گے۔

کیلفورنیا کے گورنر کہتے ہیں کہ یہ فیصلہ عوام نے کیا ہے اور اس پر ہر صورت عمل در آمد کیا جائے گا۔

امریکہ میں طبی بنیادوں پر گانجا حاصل کیا سکتا ہے جبکہ 29 امریکی ریاستوں میں کسی نہ کسی صورت میں اس کا استعمال اور فروخت قانونی بھی ہے۔

دوسری جانب ٹرمپ انتظامیہ نے اب تک گانجے کی فروخت کو وفاقی سطح پر منظور نہیں کیا۔

اعداد و شمار کے مطابق کیلوفورنیا کی گانجے کی انڈسٹری سات ارب ڈالرز سے زائد کا کاروبار کر رہی ہے، گانجے کی فروخت کے اشتہارات اب ٹی وی اور سوشل میڈیا پر بھی جاری ہوسکیں گے۔

واضح رہے کہ کولوراڈو اور واشنگٹن کی ریاستوں نے 21 نومبر 2012 کو 21 برس سے زیادہ عمر کے افراد کے گانجا رکھنے اور اسے استعمال کرنے کو قانونی قرار دے دیا تھا۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر ضرور شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں