site
stats
پاکستان

امریکا کا بھارت سے لاجسٹک‘ میری ٹائم معاہدہ خطرے کی گھنٹی ہے: ناصر جنجوعہ

اسلام آباد: مشیر قومی سلامتی ناصرجنجوعہ کا کہنا ہے کہ امریکا اور بھارت بڑے دفاعی شراکت داربن کرابھرے ہیں، تاہم ان ممالک کو یاد رہے کہ خطے کے دیگرممالک کے لئے بیرونی دنیا تک رابطے کا گیٹ وے “پاکستان” ہے.

تفصیلات کے مطابق میری ٹائم سیکیورٹی کے زیر اہتمام بحرہند میں سیکیورٹی چیلنجز سے متعلق ایک روزہ قومی کانفرنس کا انعقاد کیا گیا، جس کے مہمان خصوصی مشیر قومی سلامتی ناصرجنجوعہ تھے مشیرقومی سلامتی ناصرجنجوعہ کا کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ میری ٹائم سیکیورٹی کا تصوراہمیت کاحامل ہے.

جس کا اہم جزسمندر،گورننس اور سلامتی ہیں،یہ ہمیں مستقبل کے سنہرے مواقع بھی فراہم کرتی ہے، اس کا تصور مزید بہتر ہو رہا ہے موجودہ صورتحال کے پیش نظر بھارت اور امریکا بڑے دفاعی شراکت داربن کرابھرے ہیں، امریکا کے اس خطے میں 3لاکھ 60 ہزارفوج موجود ہیں جبکہ بھارت چین کوروکنے کی تیاریوں میں مصروف ہے.

انہوں نے کہا کہ ان ممالک کو یاد رہے کہ پاکستان خطے کے دیگرممالک کے لئے بیرونی دنیا تک رابطے کا گیٹ وے ہے، البتہ امریکا ۔کا بھارت سے لاجسٹک اور میری ٹائم معاہدہ خطرے کی گھنٹی ہے، بحرہند دنیا بھر کے دریاؤں اورسمندروں سے منسلک ہے

دوسری جانب مشیر قومی سلامتی ناصرجنجوعہ نے میڈیا سے غیررسمی گفتگو کے دوران کہا کہ سابق آرمی چیف جنرل راحیل شریف فوجی اتحاد کےسربراہ بن کراتحاد کا سبب بنیں گے، وہ اپنے تجربات اورسوچ سےغلط فہمیوں کو دور کریں گے ، اسلامی اتحاد کا فائدہ ایران سمیت مخالف ممالک کو بھی ہوگا.

سی پیک کے حوالے سے پوچھے گئے سول کے جواب میں ان کا کہنا تھا کہ پائیدار امن سےروس اوروسطی ایشائی ریاستوں کو اس راہداری سے فائدہ ہوگا.

پاک افغان تعلقات پر ان کا کہنا تھا کہ ہمیں ہر صورت افغانستان سے تعلقات بہتر بنانا ہوں گے ،مشرقی اور مغربی محاذمیں سے مغربی محاذ بہتر تعلقات سےبندکرنا ہوگا.

پاکستان اور بھارت کے تعلقات کے حوالے سے مشیر قومی سلامتی ناصرجنجوعہ نے کہا کہ ھارت کا 2محاذ کھولنا گھاٹے کا سودا ہے،بھارت کے دونوں محاذ ایٹمی طاقتوں کے خلاف ہیں۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top