سی پیک منصوبہ دونوں ممالک کی دوستی کامنہ بولتا ثبوت ہے، بھارتی جریدے کا اعتراف -
The news is by your side.

Advertisement

سی پیک منصوبہ دونوں ممالک کی دوستی کامنہ بولتا ثبوت ہے، بھارتی جریدے کا اعتراف

نئی دہلی : بھارتی جریدے اکنامسٹ نے بھی اعتراف کرلیا کہ چینی سر مایہ کاری پاکستان کیلئے سود مند ہے اورسی پیک منصوبہ دونوں ممالک کی دوستی کامنہ بولتا ثبوت ہے۔

تفصیلات کے مطابق بھارت جریدے اکنامسٹ کا کہنا ہے کہ چین کی پاکستان میں بڑے پیمانے پرسرمایہ کاری پاکستان کیلئے انتہائی سود مندہے ۔

بھارتی جریدے کے مطابق ابتدائی طور پر پاک چین راہداری منصوبے کا حجم چھیالیس ارب ڈالر تھا، جو بڑھ کر باسٹھ ارب ڈالر تک جاسکتا ہے، سب سے زیادہ توجہ توانائی منصوبوں اورگوادر پورٹ پردی گئی ہے۔

منصوبہ بندی کمیشن کے نائب چیئرمین سرتاج عزیزکا کہنا ہے کہ چینی کمپنیاں پاکستان میں تیس ارب ڈالر کی سرمایہ کاری کر چکی ہیں، ابتدائی منصوبے سال دوہزار اٹھارہ تک مکمل ہوجائیں گے، سی پیک کے انرجی پیکج کے تحت پاکستان کی بجلی پیداوارمیں سترہ ہزارمیگاواٹ کا اضافہ ہوگا۔

اس سے قبل جااپانی جریدے نکئی ایشین ریویو کا کہنا تھا کہ سی پیک پاکستانی معشیت کیلئے سب سے اہم ہے، چینی سرمایہ کاری پاکستانی معیشت کی شرح  نمومیں اضافے کا  باعث بنےگی۔


مزید پڑھیں :  سی پیک: بیرونی سرمایہ کاری میں 162 فیصد اضافہ


یاد رہے چین اور پاکستان کے مشترکہ تعاون سے سی پیک معاہدہ شروع کیا گیا ہے، جس کے تحت گوادر میں بندر گاہ اور اقتصادی راہداری کے منصوبے شامل ہیں، معاشی ماہرین نے منصوبہ شروع ہونے سے قبل ہی اس منصوبے کو پاکستان کے حق میں قرار دیا تھا۔

ماہر ین کے مطابق سی پیک کی تکمیل سے پاک چین اقتصادی رابطوں اور باہمی تجارت میں مزید استحکام آئے گا، جس سے قومی برآمدات کے فروغ میں مدد ملے گی اور اقتصادی راہداری منصوبے سے چین کے علاوہ خطے کے دیگر ممالک کے ساتھ بھی اقتصادی رابطوں میں اضافہ سے قومی معیشت کی ترقی میں مدد ملے گی۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی وال پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں