بدھ, مئی 29, 2024
اشتہار

وزارت خزانہ نے پنجاب میں انتخاب کے لئے دس ارب روپے جاری کردیئے

اشتہار

حیرت انگیز

اسلام آباد : وزارت خزانہ نے پنجاب میں انتخاب کے لئے دس ارب روپے جاری کردیئے، الیکشن کمیشن کو پنجاب اورخیبرپختونخوا میں انتخابات کیلئے اکیس ارب روپے درکارہیں۔

تفصیلات کے مطابق الیکشن کمیشن کو پنجاب اسمبلی کے انتخاب کیلئے وزارت خزانہ نے فنڈزجاری کردیے، ذرائع الیکشن کمیشن نے بتایا کہ الیکشن کمیشن کو وزارت خزانہ نے 10 ارب روپے جاری کئے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ الیکشن کمیشن کوپنجاب اورکے پی کے اسمبلی کے21ارب روپےدرکارہیں تاہم سپریم کورٹ کے حکم کی روشنی وزارت خزانہ نے پنجاب اسمبلی کے انتخاب کیلئے رقم دے دی ہے۔

- Advertisement -

ذرائع کے مطابق الیکشن کمیشن 10 ارب روپے انتخابی اخراجات پر خرچ کرے گا جبکہ کے پی اسمبلی کے انتخاب کیلئےانتخابی شیڈول جاری ہونے کے بعد رقم کی ادائیگی ہوگی۔

یاد رہے سپریم کورٹ نے پنجاب کے پی انتخابات کیس کا فیصلہ سناتے ہوئے الیکشن کمیشن کا بائیس مارچ کا فیصلہ کالعدم قرار دیتے ہوئے پنجاب میں چودہ مئی کو انتخابات کرانے کا حکم دیا تھا۔

مزید پڑھیں : سپریم کورٹ نے پنجاب اور خیبرپختونخوا الیکشن التواء کیس کا فیصلہ سنادیا

چیف جسٹس عمر عطا بندیال نے فیصلے میں کہا تھا کہ الیکشن کمیشن کو اس فیصلے کا کوئی آئینی و قانونی اختیار نہیں تھا، الیکشن کمیشن کےغیر آئینی فیصلےسے تیرہ دن ضائع ہوئے۔

سپریم کورٹ نے معمولی تبدیلی کیساتھ انتخابی شیڈول بحال کرتے ہوئے کہا تھا کہ کاغذات نامزدگی دس اپریل تک جمع کرائے جائیں گے اور حتمی فہرست 19 اپریل تک جاری کی جائے گی بکہ انتخابی نشانات20 اپریل کو جاری کئے جائیں گے۔

سپریم کورٹ نے حکومت کو 10 اپریل تک فنڈز مہیا کرنے اور 21 ارب جاری کرنے کا حکم دیتے ہوئے الیکشن کمیشن کو فنڈ وصولی رپورٹ سپریم کورٹ میں جمع کرانے کی ہدایت کردی۔

Comments

اہم ترین

مزید خبریں