The news is by your side.

Advertisement

کراچی، فیروز آباد میں 13 سالہ گھریلو ملازمہ کا قتل، 3 ملزمان کے خلاف مقدمہ درج

کراچی: شہر قائد کے علاقے فیروز آباد میں 13 سال کی گھریلو ملازمہ کے قتل کا مقدمہ تین ملزمان کے خلاف درج کرلیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق کراچی کے علاقے فیروز آباد میں 13 سال کی گھریلو ملازمہ کے مبینہ قتل کا مقدمہ تین ملزمان کاشف، ذیشان اور عثمان کے خلاف قتل کی دفعات کے تحت درج کرلیا گیا۔

رپورٹ کے مطابق 13 سال کی بچی ذیشان کے پاس 4 ماہ سے ملازم تھی، فضیہ کو ذیشان، کاشف اور عثمان نے زیادتی کی کوشش میں ناکامی پر قتل کیا۔

ایڈیشنل ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج ایسٹ نے پولیس کو مقدمہ درج کرنے کا حکم دیا تھا، جج نے آج واقعے رپورٹ پیش کرنے کا بھی حکم دیا ہے۔

مزید پڑھیں: فیصل آباد میں کمسن گھریلو ملازمہ پر تشدد

بچی کے والد کا کہنا تھا کہ میری بیٹی نے خودکشی نہیں کی اسے قتل کیا گیا ہے، فضیہ 13 ہزار روپے میں گھر کا کام کرتی تھی، پوسٹ مارٹم کرانا چاہتے تھے لیکن نہیں کرانے دیا گیا، کہا گیا کہ خودکشی کی ہے۔

بچی کے والد نے کہا کہ پولیس تعاون نہیں کررہی ہے، ہمیں انصاف فراہم کیا جائے۔

دوسری جانب وکیل کا کہنا ہے کہ بچی کا پوسٹ مارٹم کیے بغیر ہی لاش اہل خانہ کے حوالے کردی گئی، 9 اگست کے واقعے کی ایف آئی آر 23 تاریخ کو کاٹی گئی ہے، ورثاء بار بار تھانے جاتے رہے لیکن شنوائی نہیں ہوئی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں