The news is by your side.

Advertisement

منی لانڈرنگ کیس، شریف خاندان کے لیے کام کرنے والا اہم ملزم گرفتار

لاہور: قومی احتساب بیورو نے منی لانڈرنگ میں شریف خاندان کو معاونت فراہم کرنے والے اہم ملزم کو حراست میں لے لیا۔

نمائندہ اے آر وائی نیوز خواجہ نصیر کے مطابق شریف خاندان کےخلاف مبینہ منی لانڈرنگ  کیس میں بڑی پیشرفت اُس وقت سامنے آئی جب قومی احتساب بیورو (نیب) نے شریف گروپ کے سی ایف او عثمان کو حراست میں لیا۔

نیب ذرائع سے موصول ہونے والی اطلاعات کے مطابق محمد عثمان شریف خاندان کی مبینہ منی لانڈرنگ کیس کا اہم ملازم ہے، اس حوالے سے نیب کے پاس اہم ثبوت و شواہد بھی موجود ہیں۔

مزید پڑھیں: شہباز شریف خاندان کیخلاف منی لانڈرنگ کیس ، نیب کی چونکا دینے والی رپورٹ سامنے آگئی

قومی احتساب بیورو کے ذرائع کا کہنا ہے کہ ’محمد عثمان بطور سی ایف او شریف خاندان کے اکاؤنٹس پر نظر رکھتا تھا، ملزم غیر قانونی طریقے سے شریف خاندان کے لیے پیسہ باہر بھیجنے میں بھی ملوث ہے‘۔

مسلم لیگ ن کے رہنما عطاء اللہ تارڑ نے محمد عثمان کی گرفتار  کی تصدیق کی جبکہ نیب کی جانب سے ملزم کی گرفتاری کے حوالے سے کوئی اعلامیہ جاری نہیں کیا گیا۔

یاد رہے کہ اس سے قبل نیب محمد عثمان کو منی لانڈرنگ کیس میں اشتہاری قرار دے چکی ہے۔

یہ بھی پڑھیں: نیب کا شریف خاندان کے گرد مزید گھیرا تنگ ، 7ارب کا ریفرنس تیار

واضح رہے کہ رواں سال مئی میں نیب نے منی لانڈرنگ اور غیر قانون طریقے سے پیسے بنانے پر شریف خاندان کے خلاف 7 ارب روپے کا ریفرنس تیار کیا تھا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں