The news is by your side.

Advertisement

متحدہ عرب امارات میں منکی پاکس کا پہلا کیس رپورٹ

ابو ظہبی: متحدہ عرب امارات میں جسمانی خارش کی بیماری منکی پاکس کا پہلا کیس رپورٹ کیا گیا ہے، دنیا بھر میں کیسز کی مجموعی تعداد 130 سے تجاوز کر چکی ہے۔

مقامی ویب سائٹ کے مطابق منکی پاکس کا پہلا کیس متحدہ عرب امارات میں رپورٹ ہونے سے عرب ممالک میں خوف پھیل گیا۔

یو اے ای کے حکام نے پہلے منکی پاکس کیس کی تصدیق کی، جس کے بعد ملک بھر میں بیماری کی مانیٹرنگ بڑھا دی گئی، عرب امارات کے ہمراہ یورپی ممالک سلووانیا اور چیک ری پبلک میں بھی منکی پاکس کے کیس کی تصدیق کردی گئی۔

دونوں یورپی ممالک میں منکی پاکس کا کیس رپورٹ ہونے کے بعد اب تک دنیا بھر میں منکی پاکس سے متاثرہ ممالک کی تعداد بڑھ کر 18 ہو چکی ہے۔

منکی پاکس کے اب تک سب سے زیادہ کیسز یورپ میں رپورٹ ہوئے جن کی تعداد 100 کے قریب ہے جبکہ دنیا بھر میں کیسز کی مجموعی تعداد 130 سے تجاوز کر چکی ہے۔

عرب امارات سے قبل اسرائیل میں گزشتہ دو ہفتوں سے ماہرین ایک ایسے شخص کا علاج کرنے میں مصروف تھے، جن سے متعلق انہیں خدشہ تھا کہ وہ منکی پاکس سے متاثر ہے۔

اب تک اسرائیل واحد مشرق وسطیٰ کا ملک تھا، جہاں منکی پاکس کا کیس رپورٹ ہوا تھا۔

یو اے ای میں کیس رپورٹ ہونے کے بعد دیگر خلیجی ممالک سمیت جنوبی ایشیائی ممالک میں بھی تشویش کی لہر دوڑ گئی ہے، کیوں کہ امارات اور جنوبی ایشیائی ممالک کے درمیان لوگوں کا سفر عام بات ہے۔

اس وقت دنیا میں منکی پاکس کی کوئی خصوصی ویکسین موجود نہیں، تاہم اس کا علاج دیگر جسمانی اور خارش کی بیماریوں کی ویکسینز سے کیا جا رہا ہے۔

منکی پاکس کی بیماری ہوا کے ذریعے کرونا کی طرح نہیں پھیلتی جبکہ اس میں موت کی شرح بھی ایک فیصد تک ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں