The news is by your side.

Advertisement

سفاک ماں نے شیر خوار کے حلق میں بے بی وائپ ٹھنسا کر اسے مار ڈالا

امریکا میں ایک ماں نے اپنے شیر خوار بچے کے منہ میں بے بی وائپ ٹھنسا کر اسے مار ڈالا، پولیس نے ماں کو گرفتار کرلیا جس نے اپنے جرم کا اعتراف کرلیا۔

یہ واقعہ امریکی ریاست آرکنساس میں پیش آیا جہاں پولیس کو ایک بے حس و حرکت پڑے 2 ماہ کے بچے کے بارے میں اطلاع ملی۔ اطلاع ملنے کے بعد جو پہلی ریسکیو ٹیم بچے تک پہنچی اس نے بچے کو طبی امداد اور سی پی آر دیا، تاہم بچے نے کوئی ردعمل نہیں دیا۔

ابتدا میں انہوں نے خیال کیا کہ بچے کی سانس کی نالی میں کوئی چیز پھنسی جس نے سانس کی آمد و رفت روک دی، غور سے دیکھنے پر انہیں بچے کے حلق میں کوئی چیز نظر آئی۔

ریسکیو ٹیم نے وہ شے باہر نکالی تو وہ ایک بے بی وائپ تھا، ٹیم نے وائپ کو بچے کے حلق سے نکالا لیکن تب تک وہ مر چکا تھا۔

دوسری جانب عدالت میں بچے کی ماں نینسی ولیمز نے اپنے جرم کا اعتراف کرتے ہوئے کہا کہ اس نے بچے کے رونے سے تنگ آکر اسے خاموش کروانے کے لیے اس کے حلق میں وائپ ٹھنسایا۔

ماں کا کہنا تھا کہ اس کا شوہر اس وقت سو رہا تھا اور وہ نہیں چاہتی تھی کہ وہ جاگ جائے، ادھر بچہ بری طرح چیخ چیخ کر رو رہا تھا۔

ماں کے مطابق اس نے پہلے بچے کو خاموش کروانے کے لیے ایک بوتل اس کے منہ میں ٹھنسائی لیکن اس سے بچے کے مسوڑھوں کو چوٹ پہنچی جس سے وہ اور زیادہ رونے اور چیخنے لگا۔

بعد ازاں سفاک ماں نے شیر خوار کے حلق میں وائپ ٹھنسا دیا۔ پولیس نے ماں پر فرسٹ ڈگری یعنی عمداً قتل کے ارتکاب کے چارجز عائد کیے ہیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں