The news is by your side.

Advertisement

آتشزدگی سے متاثرہ نوٹرے ڈیم گرجا گھر کو ڈھانپے کے لیے کوہ پیماﺅں کی خدمات حاصل

پیرس: فرانس میں آتشزدگی کے باعث متاثر ہونے والے گرجا گھر کی بحالی میں پانچ سے چھ سال کا عرصہ لگ سکتا ہے۔

تفصیلات کے مطابق فرانس کے دارالحکومت پیرس میں حال ہی میں آتشزدگی کے نتیجے میں متاثر ہونے والے تاریخی نوٹرے ڈیم گرجا گھرکے مرمتی کام کے دوران اسے ڈھانپنے کے لیے کوہ پیماﺅں کی خدمات حاصل کی گئیں۔

تاریخی گرجا گھر کی مرمت کرنے والے حکام کا کہنا ہے کہ چرچ کے زیرتعمیر حصے کو بارش کے پانی سے بچانے کے لیے پیشہ ور کوہ پیماﺅں کی خدمات حاصل کی گئی ہیں۔

حکام کا کہنا ہے کہ رواں ہفتے پیرس میں بارش کا امکان ہے اور بارش گرجا گھر کے زیرتعمیر حصے میں جاری کام کومتاثر کرسکتی ہے۔

نوٹرے ڈیم گرجا گھر کے ترجمان فیلپ فیلنوف نے بتایا کہ ان کی پہلی ترجیح چرچ کا تحفظ ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ چرچ کو ڈھانپے کا عمل منگل کے روز انجام دیا گیا جس کے لیے پیشہ ورہ کو پیماﺅں کی خدمات حاصل کی گئی تھیں۔

انہوں نے کہا کہ آتشزدگی کے باعث متاثر ہونے والے گرجا گھر کی بحالی میں پانچ سے چھ سال کا عرصہ لگ سکتا ہے۔

دوسری جانب فرانسیسی صدر ایمانویل میکرون کا کہنا ہے کہ وہ جلد ازجلد نوٹرے ڈیم گرجا گھر کو زائرین کے لیے کھول دیں گے۔

مزید پڑھیں : پیرس کے تاریخی نوٹرے ڈیم چرچ میں آگ بھڑک اُٹھی

یاد رہے کہ 15 اپریل کو فرانس کے دارالحکومت پیرس کے 850 سال پرانے نوٹرے ڈیم چرچ میں آگ لگ گئی تھی جس نے دیکھتے ہی دیکھتے پورے چرچ کو اپنی لپیٹ میں لے لیا تھا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں