The news is by your side.

Advertisement

ایم کیو ایم کا 2023سے پہلے دوبارہ مردم شماری کرانے کا مطالبہ

کراچی : ایم کیو ایم پاکستان نے 2023سے پہلے دوبارہ مردم شماری کرانے کا مطالبہ کردیا اور کہا مردم شماری کے بعد آبادی کے تناسب سے اسمبلیوں میں نمائندگی دی جائے۔

تفصیلات کے مطابق وفاقی وزیر آئی ٹی امین الحق نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہاعلی زیدی کی سربراہی میں مردم شماری کمیٹی کے 5 اجلاس ہوچکے، 2017کی مردم شماری متنازع ہےکراچی کی آبادی کوکم دکھایا گیا۔

وفاقی وزیر کا کہنا تھا کہ مردم شماری متنازع ہونےسےمتعلق کمیٹی میں اتفاق رائےہے، ایم کیوایم کامطالبہ ہے2023سےپہلےدوبارہ مردم شماری کرائی جائے، مردم شماری کے بعد آبادی کے تناسب سے اسمبلیوں میں نمائندگی دی جائے۔

امین الحق نے کہا کہ رواں ہفتے ہی کراچی میں تجاوزات کے خلاف مہم چلائی جائے گی، کراچی کاکوئی بھی علاقہ ہو ہر جگہ بلا امتیاز تجاوزات کے خلاف کارروائی ہوگی ، تجاوزات کے خلاف آپریشن سے 12ہزار خاندان متاثر ہوں گے، آپریشن میں متاثر خاندانوں کو معاوضہ فراہم کیا جائے گا۔

ایم کیو ایم رہنما کا کہنا تھا کہ کراچی کے ترقیاتی کاموں میں رخنہ ڈالنے کی اجازت نہیں دی جائیگی، ترقیاتی کاموں پرسندھ حکومت کو بھی باور کرایا گیا وہ بھی آن بورڈہیں۔

کے فور منصوبے کے حوالے سے انھوں نے کہا کہ کے فور منصوبہ وفاق نےلےلیا،لاگت26ارب سے60ارب تک پہنچ چکی ہے، کے فور منصوبے کو 3 سال میں مکمل کیا جائے گا۔

وفاقی وزیر کا کہنا تھا کہ جس عمل سےپاکستان کی سالمیت کوخطرہ ہواسکی مذمت کرتےہیں، تمام سیاسی جماعتوں کو پاکستان کے آئین کے مطابق چلنا چاہیے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں