The news is by your side.

نوجوت سنگھ سدھو نے سونیا گاندھی کو استعفیٰ بھجوا دیا

نئی دہلی: سابق انٹرنیشنل کرکٹر اور کانگریس رہنما نوجوت سنگھ سدھو نے سونیا گاندھی کو استعفیٰ بھجوا دیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق ٹی وی کی معروف شخصیت نوجوت سنگھ سدھو پنجاب کانگریس کے سربراہ کے عہدے سے مستعفی ہو گئے ہیں۔

بھارتی میڈیا کا کہنا ہے کہ عہدہ چھوڑنے کا فیصلہ لینے سے پہلے نوجوت سدھو کی پارٹی رہنماؤں سے کوئی بات نہیں ہوئی۔

سدھو نے اپنا استعفیٰ پارٹی سربراہ سونیا گاندھی کو بھجوایا، جس میں انھوں نے مؤقف اختیار کیا کہ وہ پنجاب کے مستقبل اور پنجاب کی فلاح و بہبود کے ایجنڈے پر کبھی سمجھوتا نہیں کر سکتے۔

سدھو کا کہنا تھا کہ وہ کانگریس کی خدمت مزید جاری نہیں رکھ سکیں گے، اس لیے اپنے عہدے سے مستعفی ہو رہے ہیں۔

انھوں نے اپنا استعفیٰ اپنے ٹوئٹر اکاؤنٹ پر بھی شیئر کر دیا ہے، جس میں انھوں نے کہا کہ وہ کانگریس کی خدمت جاری رکھیں گے، ان کا کہنا تھا کہ جس جگہ آدمی سمجھوتا کرتا ہے وہیں سے اس کی شخصیت کی انہدام عمل میں آتا ہے۔

واضح رہے کہ محض ایک ہی دن قبل پنجاب کے وزیر اعلیٰ چرنجیت سنگھ چَننی، جن کا تعلق نچلی ذات دلت سے ہے، نے پہلی بار اپنی کابینہ میں اتوار کے روز اضافہ کیا ہے جن میں 15 کابینہ وزرا شامل ہیں۔

عام آدمی پارٹی نے دعویٰ کیا ہے کہ پنجاب کانگریس کے صدر نوجوت سنگھ سدھو نے اپنا عہدہ اس لیے چھوڑا ہے کیوں کہ وہ یہ برداشت نہیں کر سکتے کہ ایک دلت ریاست کا وزیر اعلیٰ بن گیا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں