The news is by your side.

Advertisement

اشتعال انگیز تقاریر : نواز شریف کیخلاف بغاوت کا مقدمہ درج

لاہور: سابق وزیراعظم نواز شریف پر بغاوت اور مجرمانہ سازش کے الزام میں مقدمہ درج کرلیا گیا ، جس میں کہا گیا کہ نواز شریف سوچی سمجھی سازش کے تحت پاکستان کے خلاف اشتعال انگیز تقاریرکر رہے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق سابق وزیراعظم نوازشریف کے خلاف تھانہ شاہدرہ میں مقدمہ درج کرلیاگیا، مقدمہ بغاوت، مجرمانہ سازش اور لوگوں کو حکومت کے خلاف اکسانے پر مقدمہ درج کیا گیا۔

سینٹرل ایگزیکٹو کمیٹی اور سینٹرل ورکنگ کمیٹی کے رہنماؤں پر بھی اجلاس میں شرکت اور نواز شریف کی تقریوں کی تائید پر مقدمہ درج کیا گیا۔

نوازشریف کے علاوہ جن افراد کے خلاف مقدمہ درج کیاگیا، ان میں شاہد خاقان عباسی ، راجا ظفرالحق ، احسن اقبال ، سردارایاز صادق، خرم دستگیر ، سینیٹر جنرل ریٹائرڈ عبدالقیوم ،مریم نواز، پرویز رشید، خواجہ آصف ، مریم اورنگزیب ، عظمی بخاری اوردیگر شامل ہیں۔

مسلم لیگ ن کے قائد نوازشریف کےخلاف ایف آئی آر بدر رشید نامی شہری کی مدعیت میں درج کی گئی، ایف آئی آر میں کہا گیا ہے کہ نوازشریف اعلی عدلیہ سے سزا یافتہ ہیں، نواز شریف لندن میں علاج کرانے کے بجائے سوچی سمجھی سازش کے تحت اداروں اور پاکستان کے خلاف اشتعال انگیز تقاریرکر رہے ہیں، ان کا مقصد پاکستان کے خلاف نفرت اور اشتعال انگیز تقریر ملکی عوام کو اداروں کے خلاف اکسانہ ہے۔

درخواست میں کہا گیا کہ ملزمان کیخلاف پاکستان پریونشن آف الیکٹراک کرائم ایکٹ کے تحت کارروائی کی جائے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں