The news is by your side.

Advertisement

2018 کے عام انتخابات کے لیے نئی حلقہ بندیوں کا اعلان

اسلام آباد: پاکستان میں 2018 کے عام انتخابات کے لیے قومی اسمبلی کی نشستوں کی نئی حلقہ بندی کا اعلان کردیا گیا، ملک بھر کی نشستوں میں معمولی رد و بدل کیا گیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق پچیس جولائی کو ملک میں مجموعی طور پر 874 نشستوں پر الیکشن ہوں گے، قومی اسمبلی کی 272 نشستوں پر نمائندوں کا انتخاب کیا جائے گا۔

اسلام آباد سے قومی اسمبلی کی نشستوں میں ایک نشست کا اضافہ کردیا گیا ہے جس کے بعد اب نشتیں تین ہوگئی ہیں، پنجاب کی 297، سندھ کی 130، خیبر پختونخوا کی 124، بلوچستان کی 51 نشستوں پر ووٹنگ ہوگی۔

نئی حلقہ بندیوں کے تحت بلوچستان کی قومی اسمبلی میں 2 حلقوں کا اضافہ کردیا گیا ہے جس کے بعد بلوچستان سے قومی اسمبلی کے 16 نمائندوں کا انتخاب عمل میں آئے گا۔

قومی اسمبلی کی حلقہ بندیوں کے مطابق پہلا حلقہ اب پشاور نہیں بلکہ این اے 1 چترال ہوگا، جب کہ قومی اسمبلی میں پنجاب کے حلقے راولپنڈی کی بجائے اٹک سے شروع ہوں گے۔

لاہور کے حلقے 123 سے این اے 136 تک ہوں گے جب کہ پنجاب کا آخری حلقہ این اے 195 راجن پور ہے، دوسری طرف پنجاب کی نشستیں 148 سے کم ہوکر 141 کردی گئی ہیں۔

صوبہ سندھ میں حلقوں کا آغاز این اے 196 ڈسٹرکٹ جیک آباد سے ہوگا، جب کہ کراچی کے 21 حلقے این اے 236 ملیر سے این اے 256 سینٹرل 4 تک ہیں۔ خیال رہے کہ سندھ اور فاٹا کی قومی نشستوں میں کوئی ردو بدل نہیں ہوا۔

عام انتخابات 25 جولائی کو ہوں‌ گے، صدر ممنون حسین نے منظوری دے دی


نئی حلقہ بندیوں کے مطابق بلوچستان کے حلقوں کا آغاز این اے 257 قلعہ سیف اللہ سے ہوگا، جب کہ بلوچستان کا آخری حلقہ این اے 272 لسبیلہ گوادر ہوگا۔

واضح رہے کہ عام انتخابات 25 جولائی کو ہوں‌ گے، گزشتہ روز صدر ممنون حسین نے انتخابات کی حتمی تاریخ کی منظوری دے دی ہے، انتخابات میں 10 کروڑ سے زائد افراد حق رائے دہی استعمال کریں گے۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں، مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں