The news is by your side.

Advertisement

نواز شریف جواب دو، کرپشن کا حساب دو،قومی اسمبلی میں شور شرابا

اسلام آباد: قومی اسمبلی میں پیر کو پھر شور شرابا ہوا، پی ٹی آئی اراکین نے نواز شریف جواب دو، کرپشن کا حساب دو کے نعرے لگائے۔

تفصیلات کے مطابق قومی اسمبلی کا اجلاس حسب توقع پیر کو بھی مچھلی بازار بنارہا، اپوزیشن اور حکومتی بنچوں کی جانب سے ایک دوسرے کے خلاف سخت تندو تیز جملوں اورنعروں کا تبادلہ ہوتا رہا ہال ایک دوسرے کی تضحیک سے گونجتا رہا۔

لیگی رہنما سعد رفیق نے کہا کہ چور چور نہ کہیں، گالم گلوچ شروع ہوئی تو ایوان کی عزت نہیں ہوگی،حکومتی رکن دانیال عزیز اور پی ٹی آئی کی رکن شیریں مزاری کےدرمیان سخت جملوں کا تبادلہ بھی ہوا۔

حکومتی وزیر خواجہ آصف کی تقریر کے دوران اپوزیشن ارکان بنچوں پر کھڑے ہوکر شور شرابا کرتے رہے ۔ خواجہ آصف نے کہا کہ میں روز عمران خان کا منتظر رہتا ہوں۔


جواب میں تحریک انصاف کے رکن اسمبلی شاہ محمود قریشی نے کہا کہ نواز شریف کو لےآؤ میں عمران خان کولےآؤں گا جس پر اپوزیشن نے نعرے بازی کی تو سعد رفیق نے کہا کہ گالم گلوچ شروع ہوئی تو ایوان کی عزت نہیں ہوگی۔

قائد حزب اختلاف اور پیپلز پارٹی کے رہنما خورشید شاہ نے کہا کہ پاناماکی رپورٹ غلط تھی تو وزیراعظم نے قوم سے خطاب کیوں کیا، یہ جھوٹ تھا تو وزیر اعظم کو پارلیمنٹ میں بات کرنے کی کیا ضرورت تھی۔

وزیر داخلہ چوہدری نثار نے کہا کہ اپوزیشن میں بات سننے کی جرأت ہونی چاہیے، اپوزیشن ارکان کے لیے تعلیم بالغان اسکول کھولنے چاہئیں۔

بعدازاں اسپییکر قومی اسمبلی نے ہنگامہ خیز اجلاس آج 4 بجے تک ملتوی کرنے کا اعلان کیا۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں