The news is by your side.

Advertisement

شمالی ،جنوبی کوریا کا جوہری ہتھیاروں کے خاتمے کے لائحہ عمل پراتفاق

پیانگ یانگ : جنوبی کوریا کے صدرمون جائے کی شمالی کوریا کے رہنما کم جونگ ان سے ملاقات میں دونوں رہنماؤں نے جوہری ہتھیاروں کے خاتمےکے لائحہ عمل پراتفاق کیا۔

تفصیلا ت کے مطابق شمالی کوریا کے دارالحکومت پیانگ یانگ میں جنوبی کوریا کے صدرمون جائے کی کم جونگ ان سے ملاقات ہوئی ، ملاقات میں دونوں رہنماؤں کے درمیان خطے کی سیکیورٹی صورتحال سمیت دیگر امور پر گفتگو ہوئی۔

جنوبی کوریا کے وزیرِدفاع اورشمالی کوریا کی فوج کے سربراہ نےعسکری تناؤ کم کرنے کے حوالے سے معاہدے پردستخط بھی کیے۔

دونوں رہنماؤں نے مشترکہ اعلامیے پر دستخط کیے اور کہا کہ دونوں ممالک کے درمیان فوجی معاہدہ خطے میں خطرات کو ختم کرنے اور امن کی جانب بڑا قدم ہے۔

اس موقع پر جنوبی کوریا کے صدرمون جائے کا کہنا تھا کہ شمالی کوریا نے جوہری ہتھیاروں کے خاتمے کے لئے لائحہ عمل پراتفاق کیا ہے اور صدرکم جونگ ان نے میزائل ٹیسٹ سائٹ کو امریکی اقدامات سے مشروط کرکے بند کرنے کی حامی بھی بھری ہے۔

صدر مون جی ان نے مزید کہا کہ جنگ کے خاتمے کے دور کا آغاز ہوچکا ہے، شمالی کوریا کے سربراہ کم جونگ ان جلد جنوبی کوریا کا دورہ کریں گے۔

خیال رہے کہ حالیہ عرصے میں ان دونوں رہنماؤں کی یہ تیسری ملاقات  ہے۔

اس سے قبل جنوبی کوریائی صدر مون جے ان کے خصوصی مندوب نے شمالی کوریا کے سربراہ کم جونگ ان سے ملاقات کی تھی اور انہیں جنوبی کوریا کے صدر کا خصوصی خط بھی پیش کیا تھا۔

مزید پڑھیں :  تاریخی ملاقات کے بعد جنوبی اور شمالی کوریا کے درمیان تعلقات میں بہتری آنے لگی

یاد رہے کہ مون جے ان اور کم جونگ ان نے تاریخی ملاقات رواں سال اپریل میں کی تھی، صدر شمالی کوریا خصوصی ملاقات کے لیے جنوبی کوریا پہنچے تھے۔

بعد ازاں دونوں رہنماؤں نے مشترکہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے باہمی جنگ کے خاتمے کے اعلان کے ساتھ ساتھ جوہری ہتھیاروں کے عدم پھیلاؤ پر بھی اتفاق کیا تھا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں