The news is by your side.

Advertisement

شمالی کوریا: اسکوئڈ گیم لانے والے کو گولی مار دی گئی

پیانگ یانگ: شمالی کوریا میں دنیا کی مقبول ترین سنسنی خیز ڈراما سیریز اسکوئڈ گیم لانے والے کو گولی مار دی گئی۔

تفصیلات کے مطابق اسکوئڈ گیم جنوبی کورین سنسنی خیز ڈراما سیریز ہے، جس میں لوگ بڑی رقم کے لالچ میں ایک کھیل کا حصہ بنتے ہیں اور پھر بچپن کے مختلف کھیلوں کے دوران ناکامی سے دوچار ہوتے ہوئے دھڑا دھڑ قتل ہوتے ہیں۔

تاہم پوری دنیا میں مقبول ہونے والی نیٹ فلیکس کی اس ویب سیریز ’اسکوئڈ گیم‘ پر شمالی کوریا نے پابندی لگا دی ہے، اور اسے اسمگل کر کے لانے والے ایک شخص کو سزائے موت دے دی گئی۔

کِم جونگ اُن کی حکومت کا کہنا ہے کہ اس سیریز نے جنوبی کوریا کے سرمایہ دارانہ نظام کو فروغ دیا ہے، یہ سیریز ایک شہری چین سے شمالی کوریا لایا، اور اسے ہائی اسکول کے طلبہ کے ساتھ شیئر کیا گیا، مذکورہ شخص اسے پِن ڈرائیو میں اسمگل کر کے لایا تھا، اور اس پر پابندی عائد ہے۔

اسکوئڈ گیم کی گڑیا کو آواز دینے والی اداکارہ کو سیریز دیکھنے کی اجازت کیوں نہیں‌ ملی؟

رپورٹ کے مطابق سیریز کو دیکھنے والے طلبہ، اسکول پرنسپل اور اساتذہ کو بھی سزا سنائی گئی ہے، اور ایک طالبِ علم کو عمر قید اور دیگر کو 5 سال کے لیے جیل بھیج دیا گیا ہے۔

نیوز رپورٹس میں کہا گیا ہے کہ مذکورہ اسکول کے پرنسپل، یوتھ سیکریٹری اور اساتذہ کو سزا کے طور پر اُن کے عہدوں سے برطرف کر دیا گیا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں