The news is by your side.

Advertisement

پاکستان میں جائرو کاپٹر کی پہلی پرواز، فضا میں سبز ہلالی پرچم لہرایا گیا

پشاور: پاکستان کی تاریخ میں پہلی بار ذاتی جائرو کاپٹر نے فضاؤں میں اڑان بھری ہے، گزشتہ روز یوم آزادی کے موقع پر اس اڑان کے دوران فضاؤں میں سبز ہلالی پرچم لہرایا گیا۔

اے آر وائی نیوز کے مطابق 14 اگست جشن آزادی کے دن ملکی تاریخ میں پہلی مرتبہ اپنے ذاتی جائرو کاپٹر کے ساتھ پرواز کرتے ہوئے سبز ہلالی پرچم فضا میں لہرایا گیا، یہ پرواز جے یو آئی ف کے رہنما ارباب فاروق جان اور انٹرنیشنل انسٹرکٹر لائسنس یافتہ پائلٹ قاضی اجمل نے اڑائی۔

یہ پاکستان میں جائرو کاپٹر کی پہلی پرواز تھی جس میں قاضی اجمل نے ایئر شو کی طرح مہارت سے بہت جذباتی انداز میں مختلف کرتب دکھائے اور کراؤڈ سے داد وصول کی۔

قاضی اجمل پاکستان کا واحد انسٹرکٹر پائلٹ ہے جس نے جدہ فلائنگ کلب میں 6 سال کے دوران سعودی رائل گارڈز کے ساتھ ساتھ 35 سے زائد لوگوں کو جائرو کاپٹر کی ٹریننگ دی ہے، تجربے کے لحاظ سے قاضی اجمل کی فضائی گھنٹوں کی لاک بک میں درج تعداد ساڑھے چار ہزار گھنٹوں سے تجاوز کر گئی ہیں۔

ارباب فاروق جان کا کہنا تھا کہ پشاور میں انشاءاللہ فلائنگ اسٹارٹ کر دی ہے، آج 14 اگست پر پوری قوم کو مبارک باد اور سرپرائز دے رہے ہیں، پہلی مرتبہ پشاور میں جائرو کاپٹر پر فلائنگ کر کے تاریخ رقم کر دی ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ وفاقی وزیر سائنس اور ٹیکنالوجی فواد چوہدری کو 18 سے زائد ای میلز کر چکے ہیں مگر انھوں نے تاحال ملاقات کے لیے رابطہ نہیں کیا۔

ارباب فاروق جان کے مطابق ٹڈی دل نے پاکستانی فصلوں کو تباہ کر دیا ہے جس کے لیے حکومت پاکستان نئے طیارے خریدنے جا رہی ہے جب کہ قاضی اجمل اور ان کی پوری فیملی نے اپنے ذاتی جہازوں سے ٹڈی دل اسپرے کرنے کی پیش کش کی ہے۔

واضح رہے کہ بین الاقوامی جائرو کاپٹر انسٹرکٹر قاضی اجمل جے یو آئی ف کے رہنما ارباب فاروق کے بھانجے ہیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں