The news is by your side.

Advertisement

متحدہ قومی موومنٹ کا پی ایس پی کو ضمنی انتخاب لڑنے کا چیلنج

کراچی : متحدہ قومی موومنٹ نے پاک سرزمین پارٹی کوضمنی انتخاب لڑنے کا چیلنج دے دیا،رابطہ کمیٹی کا کہنا ہے کہ غداروں کو ان کے گھر والے بھی ووٹ نہیں دیتے ۔

تفصیلات کے مطابق رابطہ کمیٹی نے پاک سر زمین کے سربراہ مصطفیٰ کمال کے الزامات مسترد کردیئے، ایم کیو ایم کی رابطہ کمیٹی کے رکن محمد حسین اور خواجہ اظہار الحسن نے پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ایم کیو ایم کو ووٹ را کی ایجنٹی کیلئےنہیں ملے۔

محمد حسین نے کہا کہ مصطفیٰ کمال کو ان کے پڑوسی اور ڈاکٹرصغیر کو ان کے گھروالے تک ووٹ نہیں دیتے۔ ڈاکٹر صغیر کونسلر بھی نہیں بن سکتے لیکن پارٹی نے انہیں ایم پی اے بنایا۔

رہنماؤں کا کہنا تھا کہ پاک سرزمین پارٹی کو چیلنج کرتے ہیں کہ کراچی، حیدرآباد، سکھر، نواب شاہ اور میرپور خاص میں جہاں چاہے انتخابی حلقہ منتخب کرکے وہاں الیکشن لڑ لیں۔

محمد حسین کا کہنا تھا کہ مصطفیٰ کمال اینڈ کمپنی کی اوقات کونسلر بننے کی بھی نہیں ۔ اس تحریک کے ووٹرز نے انہیں عہدے دلوائے۔

خواجہ اظہار الحسن کا کہنا تھا انہیں ووٹ را کی ایجنٹ بننے کیلئے نہیں قوم کی خدمت کیلئے ملتے ہیں، انہوں نے کہا کہ ضمیرفروشوں کیخلاف کارروائی کی بجائے کروڑوں روپے کے بنگلے میں بٹھایاگیا، عوام کو جواب دیں کہ ڈیفنس کا 12 کروڑ روپے کا بنگلہ کہاں سے آیا؟۔

ان ضمیرفروشوں کے نام پرقتل،بھتہ خوری اورچائنہ کٹنگ کے الزامات ہیں جبکہ ان کے نام جے آئی ٹیزمیں بھی شامل ہے۔

 

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں