The news is by your side.

Advertisement

پی سی بی نے ’ڈراپ ان پچز‘ کا منصوبہ مؤخر کردیا

لاہور: پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) نے ڈراپ ان پچز کا منصوبہ موخر کردیا۔

اے آر وائی نیوز کے مطابق پی سی بی نے ڈراپ ان پچز کا منصوبہ موخر کرتے ہوئے ان پچز کے لیے آسٹریلوی کنسلٹنٹ کی خدمات حاصل کرلیں، کنسلٹنٹ سے ڈراپ ان پچز کے حوالے سے رائے لی جائے گی۔

ترجمان پی سی بی کا کہنا ہےکہ آسٹریلیا سے پچزکی تیاری کے لیے مٹی بھی درآمد کرنے کا معاہدہ کیا ہے، آسٹریلوی کنسلٹنٹ ڈراپ اِن پچز سے متعلق تجاویز اور سفارشات دیں گے،کنسلٹنٹ کی تجاویز کی روشنی میں ڈراپ اِن پچز بچھانےکا فیصلہ ہوگا۔

واضح رہے کہ پی سی بی کے چیئرمین رمیز راجہ نے 2 ڈراپ اِن پچز منگوانے کا اعلان کیا تھا، اس سلسلے میں ایک کمپنی کے ساتھ 37 کروڑ روپےکا معاہدہ بھی ہوا تھا اب یہ رقم پچز کی ڈیولپمنٹ پر خرچ کی جائے گی۔

ڈراپ اِن پچز کیا ہوتی ہیں؟

عام طور پر کرکٹ گراؤنڈ میں ہی پچ تیار کی جاتی ہے لیکن ڈراپ اِن پِچز میں ایسا نہیں ہے، دراصل ڈراپ اِن پچز ایسی پچز ہیں جنہیں کھیلے جانے والے میچ کے اصلی مقام سے دور تیار کیا جاتا ہے اور بعد میں میچ کے وقت اس مقام پر منتقل کردیا جاتا ہے۔

ڈراپ اِن پچ کو گراؤنڈ سے باہر ایک لوہے کے سانچے کے اندر تیار کیا جاتا ہے جس میں نیچے پہلے مٹی اور اوپر گھاس کی تہہ لگائی جاتی ہے ،ان دونوں تہوں کو کافی عرصے تک اسی لوہے کے سانچے میں رکھا جاتا ہے جب تک کہ پچ مکمل تیار نہیں ہوجاتی۔

جب یہ پچ میچ کے مطابق تیار ہوجاتی ہے تو انہیں مشین (کرین) کی مدد سے لوہے کے سانچے سمیت گراؤنڈ میں لایا جاتا ہے اور پچ کی جگہ منتقل کیا جاتا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں