The news is by your side.

Advertisement

ٹریفک اہلکار کو کچلنے والے ڈرائیور کو موٹر وے پولیس نے گرفتار کر لیا

پشاور: پشاور ٹول پلازہ پر موٹر وے پر پولیس اہل کار پرگاڑی چڑھانے والے ڈرائیور کوگرفتار کر کے اس کے خلاف مقدمہ درج کر لیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق ترجمان نیشنل ہائی ویز اینڈ موٹر وے پولیس کا کہنا ہے کہ این ایچ اے ملازم کو کچلنے والے ڈرائیور جنید ولد عتیق کو موٹر وے پولیس نے بر وقت کارروائی کرتے ہوئے موقع پر ہی گاڑی کو رکاوٹ ڈالتے ہوئے گرفتار کر لیا۔

ترجمان محمود علی کھوکھر کے مطابق جنید گاڑی نمبر PV 401 پر موٹر وے کے ذریعے پشاور کی جانب جا رہا تھا، تیز رفتاری کی وجہ سے پولیس کی جانب سے روکنے کا اشارہ کیا گیا، لیکن اشارے کو نظر انداز کرتے ہوئے اس نے ٹریفک قوانین کی خلاف ورزی جاری رکھی۔

ڈرائیور جنید ولد عتیق

ترجمان نے مزید بتایا کہ خلاف ورزی کی اطلاع موٹر وے ٹول پلازہ پشاور کو دی گئی، جہاں ڈرائیور نے فرار ہونے کی کوشش میں این ایچ اے کے میڈیکل ہیلپر عدیل علی شاہ کو کچل ڈالا، حادثے میں عدیل کے سر پر شدید چوٹیں آئیں، جسے لیڈی ریڈنگ اسپتال پشاور منتقل کر دیا گیا ہے۔

پولیس حکام کے مطابق ملزم جنید کا تعلق پشاور کے علاقے گلبہار سے ہے، ملزم اسلام آباد سے پشاور جا رہا تھا، موٹر وے پولیس نے مردان کے پاس بھی گاڑی کو روکنے کی کوشش کی تھی۔

پشاور ٹول پلازہ پر شہری نے روکنے پر پولیس اہلکار کو کچل ڈالا

موٹر وے پر پولیس اہل کار پر گاڑی چڑھانے کا مقدمہ تھانہ چمکنی میں درج کیا گیا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں