The news is by your side.

Advertisement

پشاور، دلیپ کمار کے گھر کے حوالے سے حکومت کا بڑا فیصلہ

پشاور: معاون خصوصی برائے اطلاعات کامران بنگش کا کہنا ہے کہ پشاور میں واقع بالی ووڈ لیجنڈ اداکار دلیپ کمار کے گھر کی خریدو فروخت پر پابندی عائد کردی گئی ہے۔

اے آر وائی نیوز کی رپورٹ کے مطابق معاون خصوصی برائے اطلاعات کامران بنگش نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ حکومت بالی ووڈ لیجنڈ اداکار دلیپ کمار کا چار مرلے کا گھر خریدنے کا عزم رکھتی ہے اس مد میں گھر کی خریدو فروخت پر سیکشن فور نافذ کردیا گیا ہے۔

کامران بنگش نے بتایا کہ پہلے مرحلے میں گھر کو خریدا جائے گا جس کے لیے حکومت فنڈ مہیا کررہی ہے، دوسرے مرحلے میں گھر کی مرمت اور اس کی اصلی حالت میں بحالی کا کام کیا جائے گا۔

انہوں نے کہا کہ لیجنڈ اداکار دلیپ کمار کے گھر کو پشاور ریوائیول پلان کے تحت عجائب گھر میں تبدیل کردیا جائے گا۔

مزید پڑھیں: دلیپ کمار کی اہلیہ خیبرپختونخوا حکومت کی معترف

واضح رہے کہ گزشتہ دنوں سائرہ بانو نے دلیپ کمار کے پشاور میں واقع آبائی گھر کو خرید کر اُسے عجائب گھر یا قومی ورثہ قرار دینے کے اقدام پر خیبرپختونخوا حکومت کی تعریف کی تھی۔

سائرہ بانو کا کہنا تھا کہ ’جب مجھے یوسف صاحب کے پشاور والے گھر کی اطلاع ملی تو بہت زیادہ خوشی ہوئی کیونکہ خیبرپختونخوا کی حکومت نے اُس گھر کو محکمہ آثار قدیمہ کے حوالے کرنے کا فیصلہ کیا‘۔

یاد رہے کہ دلیپ کمار اور راج کپور کے خاندان تقسیم برصغیر سے قبل پشاور کے قصہ خوانی بازار میں رہائش پذیر تھے، بعد ازاں وہ بھارت منتقل ہوگئے تھے، یہ دونوں حویلیاں تاحال موجود اور بند ہیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں