The news is by your side.

Advertisement

یوکرین سے جنگ کے باوجود روس میں پیٹرول کی قیمتیں کم ہو گئیں

روس اور یوکرین کے درمیان جاری جنگ کے تناظر میں عالمی منڈی میں تیل کی قیمتوں میں اضافہ ہوا ہے تاہم روس میں ایندھن کی قیمتوں میں کمی آئی ہے۔

روسی میڈیا کے مطابق سینٹ پیٹرزبرگ کموڈٹی اینڈ رامیٹریل ایکسچینج میں ٹریڈنگ کے دوران پیٹرول A-92 کی قیمت میں 11 عشاریہ 6 فیصد جب کہ A-95 کی قیمت میں 9 عشاریہ 6 فیصد کمی آئی ہے۔

قیمتوں میں کمی کے اعداد و شمار 28 فروری سے 5 مارچ کے ہیں جو کہ روس یوکرین کے جنگ کے درمیان سامنے آئے۔

عالمی منڈی میں خام تیل کی قیمت بلند ترین سطح پر پہنچ گئی

روس میں تاحال ایندھن کی تھوک قیمتوں میں کمی کا رجحان ہے اور اس کی رسد میں کوئی کمی نہیں آئی جب کہ ملک میں تیل کا ذخیرہ بھی وافر مقدار میں ہے۔

روسی تیل پر پابندی کے باعث انٹرنیشنل خام تیل کی قیمتیں 2008 کے بعد بلند ترین سطح پر پہنچ گئی ہیں۔ برینٹ کروڈ خام تیل کی قیمت 127.98 ڈالر فی بیرل پر جب کہ ڈبلیو ٹی آئی خام تیل کی قیمت 123.70 ڈالر کی سطح پر موجود ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں