site
stats
پاکستان

ان فٹ طیارہ اڑان کے لیے مختص، پائلٹ کا پرواز سے انکار

کراچی: پی آئی اے کی انتظامیہ نے حادثے کے بعد بھی بے حسی اور غفلت کا مظاہرہ کرتے ہوئے ان فٹ طیارہ اڑان کے لیے پائلٹ کے حوالے کردیا تاہم پائلٹ نے اس اے ٹی آر طیارے کو اڑانے سے انکار کردیا۔

اے آر وائی نیوز کے نمائندے صلاح الدین کے مطابق حویلیاں میں طیارہ حادثے کے بعد پی آئی اے کے ایک پائلٹ چاکر علی شاہ نے اے ٹی آر طیارہ اڑانے سے انکار کردیا، طیارے کو کراچی سے موہنجو دڑو کے لیے پرواز کرنی تھی لیکن طیارے کا اے پی او سسٹم خراب تھا جس پر پائلٹ نے اپنے تحفظات کا اظہار کرتے ہوئے اڑان سے انکار کردیا اور کہا کہ جب تک یہ سسٹم ٹھیک نہیں ہوگا میں یہ جہاز نہیں اڑائوں گا۔


یہ پڑھیں : پی آئی اے کا ایک اور طیارہ حادثے سے بچ گیا


پائلٹ کے انکار کے بعد پی آئی اے انتظامیہ نے انہیں طیارہ تبدیل کرکے دیا جس کے بعد ہی پائلٹ نے طیارہ پرواز کے لیے حاصل کیا مسافروں کو لے کر موہن جو دڑو روانہ ہوا۔

رپورٹر صلاح الدین نے اینکر پرسن کے ایک سوال پر کہا کہ حادثے کے بعد پی آئی اے انتظامیہ نے انجینئرنگ ڈپارٹمنٹ کو خاص طور پر ہدایات جاری کی ہیں کہ سیفٹی معیار کو لازمی چیک جائے،پی آئی اے انتظامیہ کا کہنا ہے کہ ادارے نے کبھی بھی مسافروں کی زندگیوں پر کوئی سمجھوتا نہیں کیا اور ان کی اولین ترجیح مسافروں کی جان و مال کی حفاظت ہے اس حوالے سے چیف آپریٹنگ آفیسر کی جانب سے خاص ہدایات جاری کی گئی ہیں کہ طیارے میں ذرا سی بھی خرابی ہو تو اسے اڑان کے لیے نہ بھیجا جائے۔


یہ بھی پڑھیں: حادثے کا شکار طیارے کا انجن پہلے ہی خراب ہونے کا انکشاف


ہدایات کے باوجود طیارہ کراچی سے موہنجو دڑو پرواز کے لیے مخصوص کردیا گیا تاہم پائلٹ کے انکار پر اسے تبدیل کیا گیا، اگر پائلٹ انکار نہ کرتا تو جہاز پرواز کرجاتا۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top