The news is by your side.

Advertisement

مسلم چیچن کے خلاف یوکرینی جنگجوؤں کی شرمناک حرکت (ویڈیو وائرل)

کیف: یوکرینی جنگجوؤں نے مسلم چیچن باشندوں کے خلاف گولیوں پر خنزیز کی چربی کا روغن لگا دیا ہے، اس سلسلے میں ایک ویڈیو وائرل ہوئی ہے۔

تفصیلات کے مطابق آج یوکرین پر روسی حملوں کا پانچواں دن ہے، سوشل میڈیا پر ایک شرمناک ویڈیو وائرل ہوئی ہے، جس میں آزوف جنگجوؤں کو مسلمانوں کے لیے حرام جانور خنزیر کی چربی کا روغن گولیوں پر لگاتے دیکھا جا سکتا ہے۔

یہ ویڈیو یوکرین کے نیشنل گارڈ نے اپنے ٹویٹر اکاؤنٹ پر شیئر کی ہے، جس کا مقصد یوکرین میں روس کی جانب سے اتارے گئے مسلمان چیچن باشندوں کے خلاف استعمال کیا جانا ہے۔

خیال رہے کہ ازوف (Azov)، ایک انتہائی دائیں بازو کی رضاکارانہ انفنٹری ملٹری یونٹ ہے، یہ انتہائی قوم پرست ہیں جن پر نیو نازی اور سفید فام بالادستی کے نظریے کو تقویت دینے کا الزام ہے۔ انھوں نے پہلی بار 2014 میں ملک کے مشرق میں یوکرین کی فوج کے ساتھ مل کر روس نواز علیحدگی پسندوں کے خلاف جنگ لڑی تھی اور اس کے بعد سے انھیں باقاعدہ مسلح افواج میں شامل کر لیا گیا ہے۔

ٹوئٹر نے ویڈیو کیوں ڈیلیٹ نہیں کی؟

مذکورہ ویڈیو ٹوئٹر پر شیئر کی گئی ہے، ٹوئٹر انتظامیہ کی جانب سے اس پر نوٹ چسپاں کیا گیا ہے جس میں اعتراف کیا گیا ہے کہ اس ٹوئٹ نے نفرت انگیز طرز عمل سے متعلق ٹوئٹر کے قواعد کی خلاف ورزی کی ہے، تاہم اس کے ساتھ انتظامیہ نے یہ کہہ کر اسے ڈیلیٹ نہ کرنے کی بات کی ہے کہ ‘ٹویٹ کا قابل رسائی رہنا عوام کے مفاد میں ہو سکتا ہے’۔

ویڈیو میں جنگجو مسلمانوں کے بارے میں کیا کہ رہا ہے؟

الجزیرہ نے لکھا کہ ویڈیو کی آزادانہ طور پر تصدیق نہیں ہو سکی ہے، اس میں ایک شخص جو مبینہ طور پر ازوف کے جنگجوؤں کا رکن ہے، کو گولیوں کو سور کی چربی میں ڈبوتے ہوئے دیکھا جا رہا ہے، اور اس دوران وہ چیچن جنگجوؤں کو مخاطب بھی کر رہا ہے۔

وہ کہتا ہے: پیارے مسلمان بھائیو! ہمارے ملک میں آپ جنت میں نہیں جائیں گے، آپ کو جنت میں جانے کی اجازت نہیں ہوگی، پلیز گھر جاؤ۔ یہاں، آپ کو پریشانی کا سامنا کرنا پڑے گا۔ آپ کی توجہ کا شکریہ، خدا حافظ۔

واضح رہے کہ سرکاری فوج میں ضم ہونے کے باوجود، Azov کے جنگجوؤں نے مبینہ طور پر وولف سینجیل (Wolfsangel) نشان کو پہننا جاری رکھا ہے، جسے دوسری عالمی جنگ کے دوران متعدد نازی ڈویژنوں نے استعمال کیا تھا۔

دوسری طرف روسی صدر ولادی میر پیوٹن نے یوکرین کی فوج کے اندر ایسے یونٹوں کی موجودگی کو اپنے نام نہاد "خصوصی فوجی آپریشن … یوکرین کو غیر عسکری اور غیر نازی کرنے” کے آغاز کی ایک وجہ قرار دیا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں