The news is by your side.

Advertisement

وزیراعظم عمران خان کا اسلام آباد میں خاتون کو برہنہ اورتشدد کرنے کے واقعے کا نوٹس

اسلام آباد : وزیراعظم عمران خان نےعثمان مرزا کی جانب سے خاتون کو برہنہ اور تشدد کرنے کے واقعہ کا نوٹس لیتے ہوئے تمام ملزمان کو جلد از جلد کیفرکردار تک پہنچانے کی ہدایت کردی۔

تفصیلات کے مطابق وزیراعظم عمران کان نے اسلام آباد میں خاتون کو برہنہ اورتشدد کرنے کے واقعے کا نوٹس لے لیا ، اس سلسلے میں وزیر اعظم نے آئی جی اسلام آباد قاضی جمیل الرحمان سے رابطہ کرکے واقعےکی تمام تفصیلات حاصل کیں۔

وزیراعظم نے آئی جی اسلام آباد کو تمام ملزمان کو جلد از جلد کیفرکردار تک پہنچانے کی ہدایت کرتے ہوئے کہا اس کیس کو مثال بنایا جائے۔

ذرائع کے مطابق اسلام آباد پولیس نے تفتیش کا دائرہ کار وسیع کر دیا ہے اور واقعے کے حوالے سے مزید اہم انکشافات کی توقع کی جارہی ہے

دوسری جانب معاون خصوصی ڈاکٹر شہباز گل نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر اپنے پیغام میں کہا ہے کہ یہ گھٹیاانسان جو عورتوں،بچوں پر تشدد اور وڈیوز بناکرنشر کرتا ہے، اس کی ایک وڈیو سامنےآئی جس میں بچی پر تشدد کرکے وڈیو بنارہاتھا، وزیراعظم آفس کی ہدایت پرفوری گرفتارکیاگیا،قانون کے مطابق کاروائی ہوگی۔

خیال رہے سوشل میڈیا پر اسلام آباد کی ایک ویڈیو وائرل ہوئی تھی ، جس میں چار نوجوانوں کو ایک نوجوان اور لڑکی پر تشدد کرتے دیکھا جاسکتا ہے، ویڈیو وائرل ہونے پر ڈپٹی کمشنر اسلام آباد نے نوٹس لیا۔

پولیس حکام نے ملزمان کو چند گھنٹوں میں گرفتار کرلیا، جن میں مرکزی ملزم کی شناخت عثمان میر کے نام سے ہوئی جبکہ اُس کے ساتھ تین دوست بھی تھے، جن میں سے پولیس دو ساتھیوں فرحان، عطا الرحمان کو گرفتار کرسکی تھی۔

بعد ازاں اسلام آباد کے تھانہ گولڑہ میں ملزمان کے خلاف تشدد اور غیر اخلاقی ویڈیو بنانے کا مقدمہ سرکار کی مدعیت میں درج کیا گیا تھا ، جس میں اسلام آباد پولیس کے سب انسپیکٹر مدعی ہیں۔ ایف آئی آر کے مطابق واقع ای الیون ٹو میں واقع اپارٹمنٹس میں پیش آیا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں