The news is by your side.

Advertisement

وزیراعظم عمران خان کا ٹائیگرفورس کے نوجوانوں سے متعلق اہم فیصلہ

اسلام آباد : وزیراعظم عمران خان نے ٹائیگرفورس کے نوجوانوں سے متعلق اہم فیصلہ کرتے ہوئے ٹائیگرفورس کے ذریعے ای گورننس سسٹم لانے کی منظوری دے دی۔

تفصیلات کے مطابق وزیراعظم عمران خان کی زیرصدارت اجلاس میں ٹائیگرفورس ای گورننس پلان پر مشاورت کی گئی، معاون خصوصی عثمان ڈار نے مستقبل کی منصوبہ بندی کاجامع پلان پیش کیا۔

وزیراعظم عمران خان نے پبلک سروسز کی نگرانی اور بہتری کیلئے ٹائیگر فورس سے مدد لینے کا فیصلہ کرتے ہوئے ٹائیگرفورس کے ذریعے ای گورننس سسٹم لانے کی منظوری دے دی، جس کے بعد ٹائیگرفورس کے نوجوان مقامی سطح پر گورننس کےمعاملات رپورٹ کرسکیں گے۔

اشیائے ضروریہ کی قیمتوں اور صحت کی سہولتوں سے متعلق حکام کو آگاہ کیا جائے گا اور پناہ گاہوں، مارکیٹوں، تعلیمی اداروں اورعوامی مقامات پر سروسز کی فراہمی رپورٹ ہوگی۔

تھانےکچہری، لینڈ ریکارڈ، بجلی چوری اورعوامی شکایات پر بھی نظر رکھ سکیں گے جبکہ سروسز کی فراہمی سے انکار یا رشوت ستانی کی کوشش کورپورٹ کیا جاسکے گا۔

وزیراعظم کو ٹائیگر فورس کی پناگاہوں اورپرائس کنٹرول سےمتعلق ابتدائی رپورٹ پیش کی گئی ، رپورٹ میں پناہ گاہوں میں دستیاب سہولتوں اور مسائل سے آگاہ کیاگیا ہے۔

وزیراعظم نے ٹائیگر فورس کی رکنیت کالجوں اور جامعات تک لے جانے کا فیصلہ کرتے ہوئے عثمان ڈار کو تعلیمی ادارے کھلتے ہی رکنیت مہم تیز کرنے کی ہدایت کردی۔

اس موقع پروزیراعظم نے کہا پاکستان کاگورننس نظام بہترکرنےکیلئے نوجوانوں کا تعاون درکارہے، نوجوانوں کوگورننس سسٹم کی بہتری میں کردارادا کرنےکاموقع دیں گے۔

معاون خصوصی عثمان ڈار کا کہنا تھا کہ نوجوان ملک کی بہتری کےلیےاپنی خدمات پیش کرنےکوتیارہیں، رکنیت کھولنےکےچند دن میں ایک لاکھ نئے رکن ٹائیگرفورس میں شامل ہوئے۔

عثمان ڈار نے مزید کہا کہ انشااللہ گورننس میں بہتری کاانقلابی منصوبہ کامیاب ہو گا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں