The news is by your side.

Advertisement

کراچی آپریشن کسی جماعت کیخلاف نہیں، وزیرِاعظم نواز شریف

کراچی : وزیراعظم نواز شریف نے کہا کہ کراچی آپریشن کسی جماعت کیخلاف نہیں، آپریشن جرائم پیشہ افرادکیخلاف بلاتفریق کیا جارہا ہے، ایم کیوایم کی شکایات کا ازالہ آئین اور قانون کے مطابق کیا جائے گا۔

نواز شریف نے روز دیا کہ تمام جماعتوں سے عسکری ونگ ختم کیے جائیں،  انہوں نے پولیس، رینجرز اور انتظامیہ کو کراچی میں حالات میں بہتری پر مبارکباد دی، کراچی میں ٹارگٹ کلنگ، بھتہ خوری اور اغواء برائے تاوان کی وارداتیں تقریباً ختم ہو چکی ہیں، کراچی آپریشن کو ہر صورت کامیاب بنانا ہے۔

وزیرِاعظم نواز شریف نے کراچی میں امن و امان کے حوالے سے اجلاس کی صدارت کی، وزیرِاعظم کو ڈی جی رینجرز نے کراچی آپریشن پر بریفنگ دی، ڈی جی رینجرز کا کہنا تھا کہ شہر میں امن وامان بہتر ہونے کے باعث زندگی معمول پر آرہی ہے، ڈی جی رینجرز نے دفاتر میں حاضری کیلئے بائیو میٹرک سسٹم لگانے کے بارے میں بھی بتایا۔

اُن کا کہنا تھا کہ اس سے گھر بیٹھے تنخواہیں لینے والے ملازمین کی حوصلہ شکنی ہوئی ہے۔

اس سے قبل وزیراعظم نواز شریف نے گورنر سندھ اور وزیراعلیٰ سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ کراچی آپریشن کسی جماعت کے خلاف نہیں بلکہ بلاتفریق ہے،  ایم کیوایم کی شکایات کا ازالہ آئین اورقانون کے مطابق کیا جائے گا، اُن کا کہنا تھا کہ کراچی کی رونقیں بحال ہورہی ہیں، اُنہوں نے صوبائی حکومت وفاق کے ہرمُمکن تعاون کا بھی یقین دلایا۔

وزیر اعلیٰ سندھ قائم علی شاہ کی جانب سے ایف آئی اے اور نیب کی کارروائیوں پر اعتراض کیا تو وفاقی وزیر داخلہ چوہدری نثار نے یقین دہانی کروائی کہ آئندہ افسران کے خلاف کارروائی چیف سیکریٹری کے علم میں لا کر کی جائے گی۔

اجلاس میں وزیر دفاع خواجہ آصف، وفاقی وزیر داخلہ چوہدری نثار علی خان، وزیر اعلیٰ سندھ قائم علی شاہ، گورنر سندھ عشرت العباد، وزیر داخلہ انور سیال، کور کمانڈر کراچی نوید مختار، ڈی جی رینجرز میجر جنرل بلال اکبر، آئی جی سندھ اور دیگر حکام بھی موجود تھے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں