The news is by your side.

Advertisement

میرے خلاف پونے 2 سال تحقیقات کی گئیں، مگر دھیلے کی کرپشن نہ نکلی، شہباز شریف کی عدالت میں صفائیاں

لاہور : وزیراعظم شہباز شریف نے عدالت میں بیان میں کہا کہ میرے خلاف پونے2سال تحقیقات کی گئیں مگر دھیلے کی کرپشن نہ نکلی۔

تفصیلات کے مطابق اسپیشل جج سینٹرل کی عدالت میں منی لانڈرنگ کیس کی سماعت ہوئی ، شہباز شریف اور حمزہ شہباز عدالت میں پیش ہوئے۔

وزیراعظم شہباز شریف نے دوران سماعت روسٹرم پر آکر صفائیاں پیش کرتے ہوئے کہا کک بیکس، کرپشن، اے آر یو، نیب، این سی اے نے تحقیقات کیں، میرے خلاف پونے 2 سال تحقیقات کی گئیں مگر دھیلے کی کرپشن نہ نکلی، میں ان کا رشتہ دارتو نہیں تھا۔
.
شہباز شریف کا کہنا تھا کہ برطانیہ میں رہا کشکول تو نہیں اٹھانا تھا،وہاں کاروبارکیا، میرےخلاف کرپشن کے سیاسی کیسز بنائے گئے،

وزیراعظم نے مزید کہا کہ 2004 میں پاکستان آیا میرےپاس خدانخواستہ حرام کاپیسہ نہیں تھا، مشرف دورمیں پاکستان واپس آیا تومجھے واپس بھیج دیا گیا۔

ان کا کہنا تھا کہ خدانخواستہ میں نے کرپشن کی ہوتی تو عدالت کے سامنے نہ ہوتا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں