The news is by your side.

پی پی رہنما نے بھی ملک کے دیوالیہ ہونے کا خدشہ ظاہر کردیا

پاکستان پیپلز پارٹی کے رہنما اور سابق سینیٹر مصطفیٰ نواز کھوکھر نے کہا ہے کہ معیشت بدستور بدحال ہے اور دیوالیہ ہونے کا خطرہ بڑھ گیا ہے۔

اے آر وائی نیوز کے مطابق پاکستان پیپلز پارٹی کے رہنما اور سابق سینیٹر مصطفیٰ نواز کھوکھر نے ملک کی تشویشناک معاشی صورتحال پر سماجی رابطوں کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر اظہار خیال کیا ہے۔

سابق سینیٹر مصطفیٰ نواز کھوکھر نے اپنے ٹوئٹ میں لکھا ہے کہ ملک کی معیشت بدستور بدحال اور دیوالیہ ہونے کا خطرہ بڑھ گیا ہے۔ دوست ممالک بھی پریشان ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ کہا گیا تھا کہ ڈالر 200 پر آ جائے گا۔ مہنگائی کم اور آئی ایم ایف کو سیدھا کر دیں گے۔ الٹا آئی ایم ایف نے مزید ٹیکس لگانے تک اگلی قسط دینے سے ہی انکار کر دیا۔

مصطفیٰ نواز کھوکھر نے کسی کا نام لیے بغیر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ کیا پھر صرف مفتاح کو بَلی چڑھا کر صرف وزیر بننا مقصود تھا؟

پی پی رہنما نے مزید کہا کہ اس ضمن میں صرف آج کے اخبارات ہی پر نظر ڈال لیں۔ اخباروں نے بھی بیرونی قرضوں کی ادائیگی پر مشکلات کا ذکر کیا ہے۔

 

اس سے قبل پی ڈی ایم حکومت کے سابق وزیر خزانہ مفتاح اسماعیل نے ملک کے دیوالیہ ہونے کا خطرہ خطرناک حد تک بڑھ جانے کا دعویٰ کرچکے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں: گھر کے بھیدی مفتاح اسماعیل نے لنکا ڈھا دی

سابق وزیر خزانہ مفتاح اسماعیل نے اپنے ایک مضمون میں موجودہ وزیر اسحاق ڈار کے معیشت کے حوالے سے دعوے کو مسترد کرتے ہوئے واضح طور پر کہا ہے کہ ملک کے دیوالیہ ہونے کا خطرہ خطرناک حد تک بڑھ گیا ہے۔ اب حکومت کے پاس غلطی کی کوئی گنجائش نہیں ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں