The news is by your side.

Advertisement

حاملہ خاتون کے قاتل کو سزائے موت اور تین لاکھ روپے جرمانے کا حکم

اسلام آباد : عدالت نے جرم ثابت ہونے پر حاملہ خاتون قتل کے مجرم کو سزائے موت اور تین لاکھ روپے جرمانے کی سزا سنادی۔ ملزم نے پانچ سال قبل خاتون کو قتل کیا تھا۔

تفصیلات کے مطابق اسلام آباد کی ماڈل عدالت میں حاملہ خاتون کے قتل کے مقدمے کی سماعت ہوئی، ایڈیشنل ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج راجہ آصف محمود نے حاملہ خاتون کو قتل کرنے کے مقدمے کا فیصلہ سنا دیا۔

جس کے مطابق قتل میں ملوث ملزم محبوب الرحمن کو سزائے موت اور جرمانہ ادا کرنے کا حکم دیا گیا ہے، ملزم کو تین لاکھ روپے جرمانہ ادائیگی کا حکم بھی دیا گیا ہے۔

فیصلے کے مطابق تین لاکھ روپے جرمانے کی عدم ادائیگی کی صورت میں مجرم محبوب الرحمن کو مزید چھ ماہ قید بھگتنا ہوگی۔ ملزم محبوب الرحمن پر الزام تھا کہ اس نے 5سال قبل تھانہ کورال کے علاقہ میں وقاص شفیق کی اہلیہ کو قتل کردیا تھا۔

مقتولہ چھ ماہ کی حاملہ تھی جس کے قتل کا مقدمہ اس کے شوہر وقاص شفیق کی مدعیت میں درج کیا گیا تھا، وکلاء کے دلائل اور پیش کیے جانے والے شواہد کی روشنی میں جرم ثابت ہونے پر ملزم کو سزائے موت سنائی گئی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں