تازہ ترین

ایرانی صدر کی مزار اقبال پر حاضری، پھول چڑھائے اور فاتحہ خوانی کی

لاہور: ایران کے صدر ابراہیم رئیسی کی لاہور آمد...

پاک ایران سرحد پر باہمی رابطے مضبوط کرنے کی ضرورت ہے، آرمی چیف

راولپنڈی: آرمی چیف جنرل عاصم منیر کا کہنا ہے...

پی ٹی آئی دورِحکومت کی کابینہ ارکان کے نام ای سی ایل سے خارج

وفاقی حکومت نے پی ٹی آئی دورِحکومت کی وفاقی...

وزارت عظمیٰ کا تاج کس کے سر سجے گا؟ فیصلہ آج ہوگا

اسلام آباد: نومنتخب قومی اسمبلی آج کے خصوصی اجلاس میں قائد ایوان اور ملک کے نئے وزیراعظم کا انتخاب کرے گی۔

تفصیلات کے مطابق ملک کے نئے وزیر اعظم کا انتخاب آج کیا جائے گا، قومی اسمبلی کا اجلاس اسپیکر ایاز صادق کی سربراہی میں دن گیارہ بجے پارلیمنٹ ہاؤس میں ہوگا جہاں نئے قائد ایوان کیلئے ووٹنگ ہوگی۔

انوار الحق کاکڑ نے وزیر اعظم ہاؤس خالی کر دیا

وزارت عظمیٰ کیلئے اتحادی جماعتوں کے امیدوار سابق وزیراعظم شہبازشریف جبکہ سنی اتحاد کونسل کے امیدوار عمر ایوب خان ہیں، شہباز شریف کو پیپلزپارٹی، ایم کیو ایم، آئی پی پی اور دیگر جماعتوں کی حمایت حاصل ہے جبکہ جے یو آئی نے وزیراعظم کے انتخاب کے بائیکاٹ کا اعلان کیا ہے۔

336 رکنی ایوان میں وزیر اعظم بننے کیلئے ایک 179 ووٹ کی ضرورت ہے، ایوان میں اتحادیوں کو209  ارکان کی حمایت حاصل ہے جبکہ قومی اسمبلی میں سنی اتحاد کونسل کے ارکان کی تعداد 91 ہے اس کے علاوہ مخصوص نشستیں ابھی نہیں دی گئی ہیں۔

نئے وزیر اعظم کا انتخاب کس طرح ہوگا؟

اسپیکر کے حکم پر وزیراعظم کا انتخابی عمل شروع ہونے سے قبل پانچ منٹ تک گھنٹیاں بجائی جائیں گی، گھنٹیاں بجانے کا مقصد تمام ارکان کو اسمبلی کے اندر جمع کرنا ہوتا ہے، گھنٹیاں بجائے جانے کے بعد ایوان کے دروازے بند کر دیے جائیں گے، قائد ایوان کے انتخاب تک قومی اسمبلی ہال سے نہ کوئی باہر جا سکتا ہے نہ کسی کو آنے کی اجازت ہوتی ہے۔

اسپیکر قومی اسمبلی وزارت عظمیٰ کے نامزد امیدواروں کے نام پڑھ کر سنائیں گے، ایک نامزد امیدوار کیلئے دائیں اور دوسرے کیلئے بائیں جانب لابی مختص کردیں گے، قومی اسمبلی کا ہر رکن لابی کے دروازے پر اپنے ووٹ کا اندراج کرائے گا اور انتخابی عمل مکمل ہونے تک لابی میں رہے گا۔

وزیراعظم کی تقریب حلف برداری پیر کو منعقد کرنے کا فیصلہ

بعدازاں اسپیکر قومی اسمبلی ووٹنگ مکمل ہونے کا اعلان کریں گے، جس کے بعد ایک بار پھر دو منٹ تک گھنٹیاں بجائی جائیں گی تاکہ ارکان لابی سے ایوان میں واپس آجائیں پھر اسپیکر قومی اسمبلی ایوان کے اتنخابی نتائج کا اعلان کریں گے۔

اس طرح کامیاب امیدوار قومی اسمبلی میں قائد ایوان اور ملک کا نیا وزیراعظم بن جائے گا، انتخاب کے بعد وزیر اعظم منتخب ہونے والے امیدوار کی تقریب حلف برداری پیر کو ایوان صدر میں ہوگی۔

Comments

- Advertisement -