The news is by your side.

Advertisement

کراچی، تفتیشی اداروں نے سلیم بیلجیم گروپ کے کارندوں کو بے نقاب کردیا

کراچی: تفتیشی اداروں نے سلیم بیلجیم گروپ کے کارندوں کو بے نقاب کردیا، متحدہ پاکستان کے احتجاج میں بم دھماکے اور ایم کیو ایم پاکستان کے رہنما امین الحق کو قتل کرنے کی سازش کا انکشاف ہوا ہے۔

تفصیلات کے مطابق تفتیشی حکام کا کہنا ہے کہ سلیم بیلجیم گروپ کے کارندوں کو بے نقاب کردیا، متحدہ لندن کے دہشت گردوں کو ملک دشمن قوم پرست جماعتوں کی جانب سے بم فراہم کرنے کی تحقیقات کی جارہی ہیں۔

تفتیشی حکام نے بتایا کہ 2 ریموٹ کنٹرول بموں میں سے ایک گلستان جوہر میں استعمال کیا گیا، ایک ریموٹ کنٹرول بم سے پریس کلب کے باہر ایم کیو ایم پاکستان کے احتجاج میں دھماکا کیا جانا تھا۔

تفتیشی حکام کے مطابق دہشت گردوں کو بم کس نے فراہم کیا اس کی تفتیش ملزمان سے جیل میں جاری ہیں، ملزمان کی جانب سے رینجرز کے لیے بڑے ماموں کا کوڈ ورڈ استعمال کیا جاتا تھا۔

مزید پڑھیں: کراچی ٹارگٹ کلنگ میں ملوث ایم کیو ایم لندن کا بڑا نیٹ ورک پکڑا گیا، 8 ملزمان گرفتار

ملزم رضا سولجر نے گرفتاری کے روز ایم کیو ایم پاکستان کے رہنما امین الحق کو قتل کرنا تھا۔

رپورٹ کے مطابق سلیم بیلجیم گروپ کو کراچی میں قوم پرستوں کی معاونت حاصل رہی، سلیم بیلجیم برطانوی نمبروں سے رابطے کرتا تھا، کارروائی کے مقام پر تمام ٹیم ارکان ایک انٹرنیٹ ڈیوائس سے رابطوں میں آجاتے تھے۔

تفتیشی حکام کے مطابق تحقیقاتی اداروں کو اس سلسلے کی مزید کڑی میں اعظم، سجاد چوہدری، اسد عرف عمر، جنید عرف اویس کی تلاش ہے، آصف پاشا کی کراچی سمیت سندھ بھر میں تلاش جاری ہے جبکہ ملزمان کو ہر واردات میں الگ اسلحہ استعمال کرنے کی ہدایات دی گئی تھیں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں